نواز شریف کو سینیٹ الیکشن سے متعلق جرات کر کے پورا سچ بولنا چاہئے : سراج الحق

نواز شریف کو سینیٹ الیکشن سے متعلق جرات کر کے پورا سچ بولنا چاہئے : سراج الحق

  

لاہور (صباح نیوز) جماعت اسلامی پاکستان کے امیر سینیٹر سرا ج الحق نے کہاہے کہ سینیٹ الیکشن کے حوالے سے سابق وزیراعظم کو جرأت کر کے پورا سچ بولنا چاہیے اور میری آدھی بات کی بجائے پوری بات کی تائید کرنی چاہیے کہ کرپشن زدہ نظام کو اب دریا برد ہوناچاہیے اور پاناما ، دبئی ، لندن لیکس کے کرداروں اور قرضے معاف کرانے والوں کو اقتدار کے ایوانوں کی بجائے اڈیالہ جیل جانا چاہیے،چیف جسٹس از خود نوٹس لے کر سینیٹ کے عزت و وقار کا تحفظ کریں،یہ قوم پر ان کا بہت بڑا احسان ہوگا ، آئندہ الیکشن میں عوام سلیکشن قبول نہیں کریں گے ، ہم ملک میں آئین کی بالادستی اور افراد کی بجائے آئینی و پارلیمانی اداروں کی حکومت چاہتے ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے منصورہ میں ذمہ داران و کارکنان کی مشترکہ میٹنگ کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کیا۔سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ کچھ لوگ چیف جسٹس کے ہسپتالوں ، تعلیمی اداروں اور وفاقی و صوبائی محکموں کے دوروں پر تنقید کرتے ہیں حالانکہ اگر وفاقی اور صوبائی حکومتوں نے عوام کو کوئی ریلیف دیا ہوتا تو آج چیف جسٹس کو جگہ جگہ جانے کی ضرورت نہ پڑتی کیونکہ لوگ فریاد کرتے ہیں تو چیف جسٹس کوعدالت سے باہر آنا پڑتاہے ۔انہوں نے کہا کہ ہم تو چیف جسٹس صاحب سے استدعا کرتے ہیں کہ عوا م کو اگر خالص دودھ ،ادویات اور پانی دینا ہے تو سیاست کو ملاوٹ سے پاک کرنا ہوگا کیونکہ جب تک سیاست صاف نہیں ہوتی ، ملک میں کوئی چیز بھی ملاوٹ سے پاک نہیں ملے گی ۔انہوں نے مزید کہا کہ ملک میں صرف جماعت اسلامی ایک حقیقی جمہوری اور پروگریسو جماعت ہے اور جن جماعتوں کے اپنے اندر جمہوریت نہیں ، ان کو جمہوریت کا راگ الاپنا زیب نہیں دیتا ۔

سراج الحق

مزید :

علاقائی -