نئی انرول کمپنیوں کی طرف سے حج کوٹہ کے حصول کیلئے سفارشیوں کی لائنیں لگ گئیں

نئی انرول کمپنیوں کی طرف سے حج کوٹہ کے حصول کیلئے سفارشیوں کی لائنیں لگ گئیں

  

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)حج2018ء نئی انرول کمپنیوں کی طرف سے حج کوٹہ کے حصول کے لیے سفارشیوں کی لائنیں لگ گئیں ،وزارت مذہبی امور کو بد ترین مشکلات کا سامنا ،وفاقی وزیر مذہبی امور نے سپریم کورٹ کے احکامات کی روشنی میں تھرڈ پارٹی کے غیر جانبدار انہ آڈٹ میں اہل قرار پانے والی کمپنیوں میں میرٹ پر کوٹہ دینے کا عندیا دے دیا،حکومت کے ہر وزیر ،مشیر،ارکان اسمبلی،سینٹرز،سیاسی ،مذہبی جماعتوں کے رہنماؤں کی بغلوں میں حج کوٹہ کے لیے فائلیں موجود،بیورو کریٹس اور صحافیوں کی سفارشیں،200سے زائد نئی کمپنیوں کو کوٹہ مل سکتا ہے ذرائع کا دعویٰ،دوستانی کمیشن کی روشنی میں 2فیصد نئے ٹورز آپریٹرزکو کوٹہ دیا جا سکتا ہے ،(ن)لیگ کے حلقوں کا دعویٰ ہے 5سال سے اپنے لوگوں کو لالی پاپ دے رہے ہیں اب بھی کوٹہ نہ دیا تو قومی الیکشن میں نقصان ہو گااس لیے ہر صورت کوٹہ لیں گے،وزیر مملکت پیر امین الحسنات کوٹہ تقسیم کے عمل کا حصہ نہیں بن رہے ان کا کہنا ہے کہ میں بدنامی اپنے سر نہیں لے سکتا ،وفاقی وزیر، ایڈیشنل سیکرٹری،سیکشن آفیسر کے درمیان کھچڑی پک رہی ہے ،وفاقی سیکرٹری سمیت اور کسی کو کچھ پتا نہیں ہے ذرائع کی گفتگو،وفاقی وزیر مذہبی امور کے ذرائع کا کہنا ہے کہ سردار محمد یوسف نے گزشتہ4حج آپریشن میں صرف خدمت کی ہے اور نیک نامی کمائی ہے آخری حج میں بھی صرف میرٹ پر فیصلے ہوں گے،وفاقی وزیر کسی کی میرٹ سے ہٹ کر سفارش کے لیے بھی تیار نہیں ہیں کوٹہ دینا تو بڑی دور کی بات ہے۔

حج کوٹہ

Back

مزید :

صفحہ آخر -