چارسدہ میں تاجر تنظیموں کا ڈکیتی اور رہزنی کی وارداتوں کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

چارسدہ میں تاجر تنظیموں کا ڈکیتی اور رہزنی کی وارداتوں کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

  

چارسدہ (بیورورپورٹ)چارسدہ میں ڈکیتی اور رہزنی کے وارداتوں کے خلاف تاجر تنظیموں نے کل فاروق اعظم چوک میں احتجاجی مظاہرے کا اعلان کر دیا ۔ تاجر رہنماء حکیم اللہ کے بیٹوں سے دن دہاڑے 46لاکھ روپے چھین لئے گئے اور چالیس دن گزرنے کے باوجود پولیس ملزمان کو گرفتاری کرنے میں ناکام رہی ۔ پولیس آفسران کی درخواست پر متعدد بار احتجاجی تحریک ملتوی کی گئی مگر اب صبر کا پیمانہ لبریز ہو چکا ہے ۔ لعل محمد لعل ۔تفصیلات کے مطابق گزشتہ مہینے غنی خان روڈ پر تاجر رہنماء حکیم اللہ فوجی کے بیٹوں سے چیالیس لاکھ روپے چھینے کے واقعہ میں ملوث ملزمان کی عدم گرفتاری کے خلاف تاجر تنظیموں پر مشتمل جائنٹ ایکشن کمیٹی نے کل بروز بدھ فاروق اعظم چوک میں احتجاجی جلسہ اور تحریک شروع کرنے کا اعلان کر دیا ۔ اس حوالے سے جائنٹ ایکشن کمیٹی کا اجلاس زیر صدارت چیئر مین لعل محمد لعل منعقد ہو اجس میں دیگر ممبران میاں رحم بادشاہ ، حاجی شیراز خان ، میاں مفرق شاہ ، امداد اللہ ، حبیب اللہ ، رحیم خان ، سید صالح شاہ ، ارشاد علی ، ضیا ء الدین ، ناصر خان ، مذمل شاہ اور دیگر نے شرکت کی ۔اجلاس میں متفقہ طور پر فیصلہ کیا گیا کہ کل بروز بدھ سے چارسدہ پولیس کے خلاف باقاعدہ احتجاجی تحریک کا اغاز کیا جائیگااور فاروق اعظم چوک میں احتجاجی جلسے سے تحریک کا آگا ز کیا جائیگا۔ اجلاس میں واضح کیا گیا کہ پولیس آفسران کی طرف سے متعدد بار اس یقین دہانی کہ واقعہ میں ملوث ملزمان کو جلد از جلد گرفتار کرکے مسروقہ رقم بھی برآمدکی جائیگی مگر پولیس چالیس دن گزرنے کے باوجود ملزمان کو گرفتار کرنے میں ناکام رہی جس کی وجہ سے تاجر برادری احتجاج کرنے پر مجبور ہو چکی ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -