غیرقانونی بھر تی ،سندھ ہائیکورٹ کانیب کو انکوائری پر پیش رفت کا حکم

غیرقانونی بھر تی ،سندھ ہائیکورٹ کانیب کو انکوائری پر پیش رفت کا حکم

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


کراچی(آئی این پی ) سندھ ہائی کورٹ نے محکمہ تعلیم میں غیرقانونی بھرتیوں سے متعلق کیس میں ریمارکس دیے کہ 2ماہ میں پیش رفت کریں ورنہ انکوائری ختم کر دیں گے، کیا نیب کو ایک کیس کی انکوائری کے لیے 3،3سال چاہئیں، آپ کی تفتیش بتا رہی ہے کہ آپ کیا کر رہے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق محکمہ تعلیم میں غیر قانونی بھرتیوں سے متعلق سندھ ہائیکورٹ میں سماعت کے دوران تفتیشی افسر نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ تفتیش جاری ہے، مزید مہلت درکار ہے۔عدالت نے ریمارکس دئیے کہ کیا نیب کو ایک کیس کی انکوائری کے لیے 3،3سال چا ہئیں، چیف جسٹس ہائیکورٹ نے ریمارکس دئیے کہ آپ کی تفتیش بتا رہی ہے کہ آپ کیا کر رہے ہیں۔چیف جسٹس سندھ ہائی کورٹ نے تفتیشی افسر سے مکالمہ کرتے ہوئے کہا کہ لگتا ہے آپ بھی ملزمان سے مل جاتے ہیں، کیا کمال تفتیش کرتے ہیں۔عدالت نے ریمارکس دئیے کہ 2ماہ میں پیش رفت کریں ورنہ انکوائری ختم کر دیں گے۔نیب پراسیکیوٹر کے مطابق نورمحمد لغاری، محمدعلی خاص خیلی پرسرکاری فائل غائب کرنے کا الزام ہے، ملزمان غیر قانونی بھرتیوں اور کرپشن میں بھی ملوث ہیں۔بعدازاں سندھ ہائیکورٹ نے محکمہ تعلیم میں غیر قانونی بھرتیوں سے متعلق کیس کی سماعت 25 جون تک ملتوی کردی۔
سندھ ہائیکورٹ

مزید :

علاقائی -