کورونا مریضوں کی تعداد میں اضافہ لمحہ فکریہ ہے،الفرید ظفر

کورونا مریضوں کی تعداد میں اضافہ لمحہ فکریہ ہے،الفرید ظفر

  

 لاہور(جنرل رپورٹر)وفاقی وزارت سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کی بنائی گئی کورونا ٹاسک فورس کے ممبر پروفیسر ڈاکٹر سردار محمد الفرید ظفر نے کہا ہے کہ کورونا کی وبا کے پیش نظر حالیہ اعداد و شمار اور مریضوں کی تعداد میں اچانک اضافہ ہم سب کے لیے لمحہ فکریہ ہے اور ضرورت اس امر کی ہے کہ سینئر طبی ماہرین کے پیش کردہ خدشات پر عملدرآمد کرتے ہوئے ہر طرح کے حفاظتی اقدامات کو یقینی بنایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ پولیس اور دیگر اداروں کو ماسک کے بغیر سڑکوں پر آنے والے شہریوں کی حوصلہ شکنی کرنی چاہیے۔

 اور انہیں اس امر کا پابند بنانا چاہیے کہ وہ بلا ضرورت گھر سے باہر نہ نکلیں۔پروفیسر الفرید ظفر نے کہا کہ وفاقی اور صوبائی حکومت نے کورونا کی روک تھام کے لئے اپنے طور پر ہر ممکن قدم اٹھایا ہے جبکہ ہسپتالوں میں بھی کورونا کے مریضوں کے لئے علیحدہ اور خصوصی اقدامات یقینی بنائے گئے ہیں لیکن کورونا کی وبا کی شدت کو سامنے رکھتے ہوئے اس مرض سے بچنے کے لئے ہم سب کو اسے سنجیدگی سے لینا ہوگا اور بالخصوص مئی کے مہینے میں ممکنہ اضافے کی وارننگ کو سامنے رکھنا ہوگا۔ پروفیسر الفرید ظفر نے نشاندہی کی کہ سڑکوں پر گردو غبار سے اٹے ہوئے حفاظتی ماسک بیچنے والے خود جراثیم پھیلانے کا باعث بن رہے ہیں۔اسی طرح زبردستی کاروباری سرگرمیاں شروع کرنے والے بھی کورونا سے بچاؤ میں کوتاہی کا شکار ہو رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ وفاقی وزارت سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کی ٹاسک فورس برائے کورونا اپنی جگہ روزانہ کی بنیاد پر صورتحال کو مانیٹر کر رہی ہے اور حکومتی اداروں اور شہریوں کو اس مرض سے بچاؤ کے لئے آگاہی اور تجاویز فراہم کی جار ہی ہیں۔ پروفیسر محمد الفرید ظفر نے امید ظاہر کی کہ انشاء اللہ اگر شہریوں نے تعاون کیا اور حفاظتی اقدامات کو زیادہ سے زیادہ یقینی بنایا گیا تو کورونا کی وبا سے نمٹنا آسان ہو جائے گا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -