کراچی، گرفتار تاجروں کا 14روزہ جوڈیشل ریمانڈ جیل بھیج دیا

  کراچی، گرفتار تاجروں کا 14روزہ جوڈیشل ریمانڈ جیل بھیج دیا

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)عدالت نے گزشتہ روز گرفتار کیے گئے تاجر رہنما سمیت 6 تاجروں کو 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا۔جمعرات کونیپئر پولیس نے گرفتار تاجر رہنما سمیت 6 تاجروں کو جوڈیشل مجسٹریٹ جنوبی کی عدالت میں پیش کیا، پیش کیے گئے ملزمان میں حماد پونا والا، محمد احسان، محمدخلیل، جاوید عبدالشکور، ملک عقیل اور فیصل حسن زئی شامل ہیں۔تفتیشی افسر نے عدالت کو بتایا کہ ملزمان پر لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی، ہنگامہ آرائی، تشدد اور لوگوں کو اکسانے کا الزام ہے جبکہ ملزمان کے وکلا کی جانب سے ضمانت کی درخواست کی گئی جس کو عدالت نے مسترد کرتے ہوئے تاجر رہنما سمیت 6 تاجروں کو 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا۔عدالت کے باہر میڈیا سے گفتگو میں تاجر رہنماؤں نے کہا کہ وفاق اور صوبائی حکومت کی لڑائی میں تاجر پس رہا ہے، ایک کو منائیں تو دوسرا روٹھ جاتا ہے، گورنر صاحب سے میٹنگ کے دوران سفارشات دینے پر ایک گھنٹے میں کاروبار کھولنے پر اتفاق ہوا تھا، ہم نے حکم کو مدنظر رکھتے ہوئے صرف ڈیمو کیا تھا، دیکھنا چاہتے تھے کہ ایس او پیز پر کس طرح عمل کیا جائے گا، تاجروں کو سہولیات دینے کے بجائے گرفتار کیا گیا، تاجر معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتے ہیں، خدارا تاجروں کے ساتھ ایسا سلوک نہیں کیا جائے۔اس سے قبل لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی کے الزام میں گرفتار ان تاجروں کو ایک ہی گاڑی میں عدالت لایا گیا اور احاطہ عدالت میں بھی پولیس نے سماجی فاصلے کا خیال نہیں رکھا۔پولیس نے 2،2تاجروں کو ایک ہی ہتھکڑی لگا کر عدالت میں پیش کیا جبکہ تمام تاجروں کو احاطہ عدالت میں بھی ساتھ بٹھا دیا۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -