ٹانک،پولیٹکل محررز کاقلم چھوڑ ہڑتال اور احتجاج چوتھے روز میں داخل

ٹانک،پولیٹکل محررز کاقلم چھوڑ ہڑتال اور احتجاج چوتھے روز میں داخل

  

ٹانک(نمائندہ خصوصی)پولیٹکل محررز کاقلم چھوڑ ہڑتال اور احتجاج چوتھے روز میں داخل ممبر صوبائی اسمبلی مولانا اعصام الدین کے علاوہ کثیر تعداد میں محسود قبائل کے سرکردہ عمائدین نے بھی احتجاجی کیمپ میں شرکت کی۔تفصیلات کے مطابق 85 پولیٹکل محرروں نے اپنے جائز حقوق کے حصول کے لئے گذشتہ 4دنوں سے ڈپٹی کمشنر جنوبی وزیرستان کمپاونڈ میں قلم چھوڑ ہڑتال کرکے احتجاجی کیمپ لگایاہواہیاحتجاجی کیمپ سے خطاب کرتے ممبر صوبائی اسمبلی مولانا اعصام الدین کا کہنا تھا کہ ان محرروں نے انتہائی کٹھن اور نامساعد حالات میں فرائض سرانجام دی ہے لیکن انضمام کے بعد قبائلیوں کا مذاق اڑیا جارہاہے, ممبر صوبائی اسمبلی کا کہنا تھا کہ جنوبی وزیرستان میں انتہا پسندی اور دہشت گردی کی وجہ سے بدامنی کے وقت کوئی آفیسر جنوبی وزیرستان میں ڈیوٹی دینے کیلئے تیار نہیں تھا اس وقت کی مشکلات میں ان محررز نے دلیری اور جوانمردی کے ساتھ پورے پورے تحصل کا نظام چلایا اور جہاں تک ممکن ہوسکا انہوں نے ملک وقوم کی اعلی درجے کی خدمت کی ہے لیکن ہماری بد قسمتی یہ ہے کہ ہمارے ملک میں ایسے لوگوں کی جگہ نہیں ہے انہوں نے کہا کہ محرروں کے مطالبات ان کا حق اور جائز ہے اور اس مشکل کی گھڑی ہم انکو تنہا نہیں چھوڑینگے اور ان کی جائز حقوق دلانے کے لئے ہم مکمل طور پر ان کا ساتھ دئینگے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -