جنوبی کوریا کی نئے بچے کی پیدائش پر والدین کو ہزاروں ڈالر انعام دینے کی تیاری

جنوبی کوریا کی نئے بچے کی پیدائش پر والدین کو ہزاروں ڈالر انعام دینے کی ...
 جنوبی کوریا کی نئے بچے کی پیدائش پر والدین کو ہزاروں ڈالر انعام دینے کی تیاری

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

سیول (ڈیلی پاکستان آن لائن ) جنوبی کوریا گرتی ہوئی شرح پیدائش بڑھانے کے لئے نئے بچے کے پیدا ہونے پر والدین کو 10 کروڑ کوریائی وان (77 ہزار ڈالر یا دو کروڑ پاکستانی روپے) کی رقم دینے پر غور کر رہا ہے۔
غیر ملکی نیوز ویب سائٹ ’دا سٹریٹس ٹائمز‘ کے مطابق جنوبی کوریا کے زیر انتظام اینٹی کرپشن اور سول رائٹس کمیشن نے عوامی رائے جاننے کے لئے ایک سروے کا آغاز کیا۔کمیشن نے اپنے بیان میں کہا کہ اس سروے کے ذریعے ہم ملک میں شرح پیدائش کے فروغ کی پالیسیوں کا از سر نو جائزہ لیں گے تاکہ یہ معلوم کیا جا سکے کہ آیا براہ راست مالی امداد اس مسئلے کا مو¿ثر حل ہو سکتی ہے یا نہیں۔آن لائن سروے میں چار سوالات پوچھے گئے ہیں، جن میں یہ بھی شامل ہے کہ کیا اس طرح کی مالی امداد بچے پیدا کرنے کی ترغیب دے گی اور کیا وہ سمجھتے ہیں کہ اس پروگرام پر سالانہ 22 ٹریلین وان خرچ کرنا قابل قبول ہے۔
واضح رہے کم شرح پیدائش کے اقدامات کے لئے مختص یہ رقم جنوبی کوریا کے قومی بجٹ کا تقریباً نصف حصہ ہے جو کہ 48 کھرب وان سالانہ بنتا ہے، یہ اقدام جنوبی کوریا میں آبادی کے بڑھتے ہوئے بحران سے نمٹنے کے لئے اٹھایا جا رہا ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -