وفاقی حکومت انتخابی اصلاحات میں سنجیدہ نہیں،عبدالعلیم خان

وفاقی حکومت انتخابی اصلاحات میں سنجیدہ نہیں،عبدالعلیم خان

لاہور(نمائندہ خصوصی) تحریک انصاف سنٹرل پنجاب کے صدرعبدالعلیم خان نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت انتخابی اصلاحات میں سنجیدہ نہیں اسی لیے4سال بعد بھی بات کمیٹیوں اور سفارشات سے آگے نہیں بڑھ سکی انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف کا دوٹوک موقف ہے کہ بائیومیٹرک کے بغیر شفاف انتخابات ممکن نہیں ہونگے۔ عبدالعلیم خان نے مختلف اضلاع کے پارٹی رہنماؤں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اگر نیت صاف ہو تو انتخابات کو شفاف بنانے کیلئے بھی یہ نظام استعمال کیا جاسکتا ہے۔عبدالعلیم خان نے کہا کہ الیکشن میں دھاندلی کیلئے نت نئے حربے آزمانے والی ن لیگ حلقہ 120میں بھی سرکاری وسائل کا بے دریغ استعمال کررہی ہے۔ کئی سال تک کسی نے مسائل حل کرنے پر توجہ نہیں دی،اب تمام محکمے اچانک مہربان کیسے ہوگئے؟انہوں نے کہا کہ اپنی بادشاہت کو طول دینے کیلئے آئین میں ہی ترامیم کا سوچنے والے پہلے کرپشن کیسز سے نمٹنے کی تیاری کریں۔

کیونکہ انہیں اپنے کیے کا ہر حال میں حساب دینا ہوگا اور سپریم کورٹ میں نظر ثانی اپیل کو جواز بناکر نیب ریفرنسز سے جان چھڑانے کی کوشش کامیاب نہیں ہوگی، ایک ہفتہ انقلاب کے نعرے لگاکر تحقیقات سے بچنے کا ڈرامہ ناکام ثابت ہوچکا،لوٹ مار کا حساب دینا پڑے گا، عبدالعلیم خان نے کہا کہ بادشاہ سلامت سیاسی منظر نامے سے غائب ہونے پر طلملا اٹھے ہیں لیکن اب ان کی کہانی ختم ہو چکی ہے اور وہ کبھی اقتدار میں واپس نہیں آئیں گے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4