ایشیا کا سب سے صاف ستھرا گاؤں،ہر شخص صفائی کو اولین سمجھتا ہے

ایشیا کا سب سے صاف ستھرا گاؤں،ہر شخص صفائی کو اولین سمجھتا ہے
 ایشیا کا سب سے صاف ستھرا گاؤں،ہر شخص صفائی کو اولین سمجھتا ہے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک)گاؤں کا نام سنتے ہی سب کے ذہن میں کچے مکانات اور کوڑا کرکٹ کا خیال آتا ہے لیکن بھارت کا ایک گاؤں ایسا بھی ہے جسے ایشیا کا سب سے صاف ستھرا گاؤں کہا جاتا ہے۔بھارت کے اکثر دیہات گندگی اور بدبو سے بھرپور جب کہ بیشتر گاؤں ٹوائلٹ کی سہولیات سے بھی محروم ہیں لیکن بھارت میں مولیننوگ گاؤں ایسا ہے جو صفائی کی اعلیٰ مثال ہے۔مولیننوگ گاؤں میں بچہ بڑا ہر کوئی صفائی کا خاص خیال رکھتا ہے اور وہاں کوڑا کرکٹ تو دور بدبو کا بھی تصور نہیں۔ بھارتی ڈسکور میگزین کے ایک صحافی نے مولیننوگ گاؤں کو سب سے پہلے 2003 میں ایشیا کا صاف گاؤں قرار دیا۔ ان کی دلچسپی اس بات سے اور بڑھ گئی کے یہاں ہر شخص سب سے پہلے گلی، باغ، درخت کی صفائی کو اپنا اولین فریضہ سمجھتا ہے جس سے یہاں کا ماحول دلکش اور صاف ستھرا رہتا ہے۔مولیننوگ گاؤں کی تعریف سننے کے بعد مقامی سیاحوں کے علاوہ دنیا بھر سے لوگ وہاں آنے لگے اور آج یہ گاؤں اپنی صفائی کی وجہ سے بے حد مقبول ہورہا ہے۔

130 سال قبل مولیننوگ گاؤں میں کولیرا کا مرض پھیل گیا تھا جس کے بعد وہاں کے مکینوں نے صفائی پر زور دیا اور اس مرض سے بچنے کے لئے آہستہ آہستہ صفائی ستھرائی گاؤں کی روایت بن گئی۔

مزید : میٹروپولیٹن 4