14 سالہ برطانوی لڑکی نے موٹاپے سے تنگ آ کر خود کشی کر لی

14 سالہ برطانوی لڑکی نے موٹاپے سے تنگ آ کر خود کشی کر لی
 14 سالہ برطانوی لڑکی نے موٹاپے سے تنگ آ کر خود کشی کر لی

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) برطانیہ میں ایک 14سالہ لڑکی نے پھندہ لے کر خودکشی کر لی، لیکن کچھ عرصہ بعد اس کے بھائی کو کمرے سے اس کی خفیہ ڈائری مل گئی جس میں لڑکی نے خودکشی کی ایسی حیران کن وجہ لکھ رکھی تھی کہ سن کر آپ بھی دنگ رہ جائیں گے۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق برطانوی شہر مانچسٹر میں شارلٹ بیرن نامی طالبہ نے اپنی الماری میں پھندے سے جھول کر خودکشی کی۔ اگلی صبح اس کا 20سالہ بھائی ٹیلر بیرن کمرے میں گیا تو اس کی لاش پھندے سے جھولتی ہوئی پائی۔رپورٹ کے مطابق گزشتہ دنوں ٹیلر بیرن کو شارلٹ کے کمرے سے اس کی ایک خفیہ ڈائری ملی ہے جس میں اس نے لکھ رکھا تھا کہ وہ اپنے موٹاپے سے پریشان ہے اور اس دنیا میں نہیں رہنا چاہتی۔ گزشتہ کرسمس کے بعد ایک روز اس نے پیراسیٹامول کی بہت زیادہ گولیاں کھا لیں اور بے ہوش ہو گئی۔ اسے گھر والے فوراً ہسپتال لے گئے جہاں ڈاکٹروں نے اس کی جان بچائی۔

گھر آ کر اس نے اپنی ڈائری میں لکھاکہ’’میں موت کے بالکل قریب تھی۔ میں ہر چیز بھول جانا چاہتی تھی، میں صرف مرنا چاہتی تھی، میں موت کے اتنا قریب تھی، کیوں ان لوگوں نے مجھے بچا لیا، کیوں! میں اب یہاں نہیں رہنا چاہتی، یہ لوگ کیوں مجھے مرنے نہیں دیتے۔‘‘اس کے دو ماہ بعد فروری میں شارلٹ نے پھندہ لے لیا۔ رپورٹ کے مطابق واقعے کی عدالتی تحقیقات جاری ہیں۔پولیس نے عدالت میں بتایا ہے کہ ’’شارلٹ نے مرنے سے قبل اپنے ایک دوست کو موبائل فون پر آخری پیغام میں لکھا کہ ’’نجانے میرے ساتھ کیا مسئلہ ہے، میں خوداعتماد نہیں ہوں۔‘‘

مزید : میٹروپولیٹن 4