تھانوں میں پولیس اہلکاروں کی ویڈیو اور تصاویر بنانے کی ممانعت

تھانوں میں پولیس اہلکاروں کی ویڈیو اور تصاویر بنانے کی ممانعت

ملتان(کرائم رپورٹر) آئی جی پنجاب عارف نواز نے صوبہ بھر کے ضلعی پولیس سربراہان کو احکامات جاری کیے ہیں کہ کسی بھی غیر متعلقہ شخص کو پولیس دفاتر اور صوبہ بھر کے تھانوں میں پولیس اہلکار وں کی ویڈیوز اور تصاویر بنانے کی اجازت نہ دی جائے ۔اس حوالے سے آئی جی پنجاب نے مراسلہ(بقیہ نمبر33صفحہ12پر )

جاری کیا ہے ،جس میں قوائد و ضوابط لاگو کیے گئے ہیں۔جن کے مطابق کسی بھی غیر متعلقہ شخص یا پولیس اہلکار کو اجازت نہ دی جائے کہ وہ پولیس سٹیشن میں کیمرہ موبائل فون ،لیپ ٹاپ یا دیگر ذرائع سے تصاویر،سیلفی اور ویڈیو ریکارڈنگ کرے۔اسی طرح ایف آئی آر رجسٹر کرتے وقت فریقین سے موبائل فون لے لیے جائیں تاکہ وہ ویڈیو یا آڈیو ریکارڈنگ نہ کرسکیں،حوالا ت میں بند ملزمان کے ورثا انہیں موبائل فون نہ دیں اور نہ ہی کوئی ویڈیو ریکارڈنگ کریں ،آئی جی پنجاب نے ہدایت جاری کی ہے کہ اگر کوئی غیر متعلقہ شخص ایسی حرکت کرے تو فوری طور پر اس کے خلاف کاروائی عمل میں لائی جائے۔اس بارے ڈی پی آر پنجاب نایاب حیدر کا کہنا ہے کہ مذکورہ قوائد و ضوابط کا اطلاق میڈیا پر نہیں ہوگا ،صحافیوں کو تصاویر یا ویڈیو بنانے کی اجازت ہے۔اس کا اطلاق غیر متعلقہ ،پرائیویٹ افراداور پولیس اہلکارا اور افسران پر لاگو ہوگا۔

مزید : ملتان صفحہ آخر