مردان چیمبر آف کامرس انتخابات ،اختلافات کھل کر سامنے آگئے

مردان چیمبر آف کامرس انتخابات ،اختلافات کھل کر سامنے آگئے

مردان (بیو رورپورٹ ) مردان چیمبر آف کامرس اینڈا نڈسٹری میں اگلے ماہ ہونے والے انتخابات سے قبل اختلافات سامنے آگئے چیمبر کے برسراقتدار اور حزب اختلاف واضح گروپوں میں بٹ گئے،چیمبر کی رکنیت اور ایگزیکٹو باڈی انتخابات میں حصہ لینے والے امیدواروں کے داخلہ رسیدیں جعلی ہونے کا انکشاف ہواہے ڈائریکٹر جنرل ٹریڈ آرگنائزیشن نے چیمبرکو شوکاز نوٹس جاری کردیا تفصیلات کے مطابق مردان کے ایوان صنعت وتجارت کے انتخابات جو ستمبر کے آواخر میں ہورہے ہیں سے قبل اختلافات ایک بارپھر سنگین ہوگئے ہیں اور چیمبر کے بانی حاجی نسیم الرحمان نے گذشتہ دوسالوں کے دوران ہونے والے انتخابات کے لئے داخلہ رسیدوں سمیت ممبران کی رکنیت ڈائریکٹر ٹریڈ آرگنائزیشن کے ہاں چیلنج کردیاہے اس حوالے سے ذرائع نے انکشاف کیاہے کہ حالیہ دوبرسوں کے دوران بعض ممبران جن کی تعداد 20سے زائد ہے میں ایگزیکٹوباڈی ممبران بھی شامل ہیں ان کے داخلہ رسیدوں کا ریکارڈ نہ تو چیمبر میں موجود ہے اورنہ ہی بنکوں کے پاس کوئی دستاویز موجود ہے ڈی جی ٹی او نے گذشتہ روز سماعت کے بعد چیمبر کو شوکاز جاری کرتے ہوئے 6ستمبر تک جواب طلب کرلیاہے ادھر ٹریڈ گروپ کے احسان باچا وغیرہ نے ڈی جی ٹی او کے دفتر سے ایسوسی ایٹ ممبران کے حوالے سے اپنے اعتراضات واپس لئے ہیں تاہم چیمبر میں اس وقت چار واضح گروپ سامنے آئے ہیں انڈسٹری گروپ کے حاجی نسیم الرحمان اور موجودہ صدر سجاد خان الگ الگ فورم پر کھڑے ہیں ٹریڈ گروپ کے احسان باچہ ، حاجی محمد اسلام اور سلطان مہمند ایک صفحے پر ہیں جبکہ سابق صدر ظاہرشاہ جوٹریڈ گروپ کی سرپرستی کررہے ہیں الگ پرواز کرتے نظر آرہے ہیں گذشتہ سال چیمبر میں اختلافات او رآگ لگنے کے واقعے کے بعد مصالحتی جرگہ نے تمام فریقین کے درمیان راضی نامہ ہوگیاتھا تاہم ایک سال گزرنے کے بعد اختلافات کی دبی چنگاری ایک بار پھر بھڑ ک اٹھی ہے اس حوالے سے چیمبر آف کامرس کے سیکرٹری جنرل کے موقف جاننے کیلئے ان سے مسلسل رابطہ کیاگیاتاہم وہ فون اٹنڈ نہیں کررہاتھا ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر