غیر ترقیاتی بجٹ میں کٹوتی کرکے سرکاری محکموں سے ناانصافی کی گئی ،سدید الرحمان

غیر ترقیاتی بجٹ میں کٹوتی کرکے سرکاری محکموں سے ناانصافی کی گئی ،سدید ...

الپوری (ڈسٹرکٹ رپورٹر)شانگلہ کے ضلع کونسل میں اپوزیشن لیڈر حاجی سدید الرحمان نے کہا ہے کہ نان سیلری بجٹ میں ایوان کو اعتماد میں لئے بغیر غیرترقیاتی بجٹ میں بھاری کٹوتی کر کے سرکاری محکموں کے ساتھ زیادتی کی ہے، سرکاری محکموں اور سرکاری افسران کی توہین کرکے ضلع کونسل شانگلہ غیر اخلاقی عمل کے مرتکب ہورہے ہیں، سرکاری افسران کی تذلیل سے گریز کیا جائے سرکاری اہلکاروں کی تذلیل کی گئی تو اپوزیشن بھرپور مخالفت کرے گی۔ غیرترقیاتی بجٹ میں بھاری کٹوتی کر کے سرکاری محکمے مالی بحران کا شکار ہوسکتے ہیں جس سے عوام کو بھی مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا ۔ ن خیالات کا اظہار ضلع کونسل شانگلہ میں اتحادی جماعتوں کے اپوزیشن لیڈر حاجی سدید الرحمان نے گزشتہ روز سپیکر ضلع کونسل کامران اقبال کے زیر صدارت کونسل کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن حکومت کی ہر وہ جائز اور ضلع کی فلاح کیلئے کئے جانے والے کام کی حمایت کرے گا جو یہاں کے عوام کے فلاح و بہبود کیلئے ہو،ایسا تاثر پیدا کرنا غلط ہے کہ اپوزیشن ہر چیز پر منفی سیاست کر رہی ہے ، سیاست کا مقصد صرف اور صرف عوام اور علاقہ کی بے پناہ خدمت ہے اور یہاں کی پسماندگی دور کرنے کیلئے ضلعی حکومت کے ساتھ ہر پلیٹ فارم پر سیاسی مقاصد کو بالاتر رکھتے ہوئے اقدامات اٹھائیں گے ۔ضلع کونسل میں پیش ہونے والے واقع کی شدید مزمت کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ایسے واقعات ایوان کے تقدس کو پامال کرنا ہے ، عوامی نیشنل پارٹی ایک جمہوری پارٹی ہے اور جمہوری روایات پر یقین رکھتی ہے تاہم یہ واقع ایوان میں رونما ہوا جس پر مایوسی ہیں ،حکمراں جماعت کے کچھ لوگ اپنے سیاسی مقاصد حاصل کرنے کیلئے اپوزیشن پر بلا جواز اور غیر مناسب الزامات لگا رہی ہے، سرکاری محکموں کے غیرترقیاتی بجٹ میں بھاری کٹوتی کرنا عوامی نیشنل پارٹی کو منظور نہیں اس سے محکموں کی کارکردگی متاثر ہو گی جس کا براہ راست عوام پر اثر ہوگا، بجٹ میں کٹوتی سرکاری محکوں کے ساتھ امتیازی سلوک کے مترادف ہے، ضلع کے تمام سرکاری محکموں میں ملازمین کا تعلق شانگلہ سے ہے۔۔

مزید : پشاورصفحہ آخر