ڈینگی بخار خطرناک ہے احتیاطی تدابیر سے بچاؤ آسان ہے :حیدر گوندل

ڈینگی بخار خطرناک ہے احتیاطی تدابیر سے بچاؤ آسان ہے :حیدر گوندل

شیرگڑھ (نامہ نگار) اسسٹنٹ کمشنر تخت بھائی عون حیدر گوندل نے کہا ہے کہ ڈینگی بخارایک خطرناک مرض ہے مگر احتیاطی تدابیر سے اس سے بچنا آسان ہے ڈینگی بخار کا وائرس انسانوں تک ایک خاص قسم کے مچھر کے کاٹنے سے پہنچتاہے جو ڈینگی بخار کا سبب بنتاہے تحصیل تخت بھائی میں ابھی تک کوئی کیس رجسٹرڈ نہیں ہوا ہے مگر پھر بھی احتیاط کے طورپرٹی ایچ کیو ہسپتال میں10بستروں کا علیٰحدہ وارڈبنادیاگیاہے ڈینگی بخار کے دو قسم ہیں ڈینگی بخار اور ڈینگی بخار کی خونی قسم جس میں مسوڑوں ،ناک اور جسم کے دیگر اعضاء سے خون بہنا شروع ہوجاتاہے انہوں نے کہا کہ تیز بخار جسم میں شدید درد ،بھوک کا نہ لگنا، آنکھوں کے پیچھے شدید درد ہونا،پانچویں یا ساتویں دن جلد پر خارش اور سرخ دھبوں کا ظاہر ہونا ،بار بار الٹی آنا اور کالا پاخانہ آنا ڈینگی بخار کے علامات ہیں اگر مندرجہ بالا علامات میں سے کوئی بھی علامت ظاہر ہوں تو فوراََ ڈاکٹر سے رجوع کریں مریض کو پانی ،جوس اور سوپ وغیرہ زیادہ پلانا شروع کریں ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز تحصیل کمپلیکس میں ڈینگی وائرس سے آگاہی مہم کے متعلق منعقدہ سیمینارسے خطاب کرتے ہوئے کیاسیمینار سے تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال تخت بھائی کے ایم ایس ڈاکٹر حق نواز ، نائب ناظم اعلیٰ تخت بھائی جاوید اقبال، خاتون ضلعی کونسلر نعیمہ ناز، تحصیل کونسلرز محمد شعیب خان ،معزاللہ خان مہمند، محمدسعیداور نائب تحصیلدار یاد اللہ نے بھی خطاب کیا انہوں نے مزید کہا کہ ڈینگی مچھر جمع کئے گئے صاف پانی میں افزائش پاتے ہیں ان کے افزائش کی خاص جگہوں میں ڈرم ،بالٹیاں،گملے،ٹائر اور وہ جگہیں ہیں جہاں بارش کا پانی جمع ہوسکتاہے ڈینگی بخار کا مچھر دن کے اوقات صبح اور شام میں کاٹتا ہے اس سے بچنے کے لئے جسم کو پوری طرح ڈھانپ دیں مچھر بھگانے کے لئے کوائل، میٹ اور لوشن استعمال کریں

تخت بھائی(نامہ نگار ) اسسٹنٹ کمشنر عون حیدر گوندل نے کہا ہے کہ عوام کو پریشان ہونے کی ہرگز ضرورت نہیں ہے، ڈینگی وائرس کے خلاف تمام تر انتظامات ہو چکے ہیں، تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال میں الگ یونٹ قائم کر دیا گیا ہے، فوکل اور گھر گھر سپرے کا پروگرام جلد شروع کیا جائے گا، معاشرے کے ذمہدار افراد، علماء کرام ڈینگی وائرس کے بارے عوام میں شعور اجاگر کرنے کے لیے بھر پور کردار ادا کریں ۔ وہ اپنے دفتر میں ڈینگی وائرس کے بارے میں احتیاطی تدابیر پر ایک روزہ سیمینار سے خطاب کر رہے تھے جس سے تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال کے ایم ایس ڈاکٹر حق نواز خان، ڈاکٹر مراد خان، تحریک انصاف کے ضلعی خاتون کونسلر نعیمہ ناز، تحصیل کنوینر جاوید اقبال، تحصیل کونسل میں اپوزیشن لیڈر حاجی معز اللہ خان، تحصیل کونسلر شعیب عالم خٹک ، تحصیلدار یادواللہ خان، ویلج کونسل کے ناظم شیر زمان خان اور دیگر نے بھی خطاب کیا۔ اس موقع پر ایڈیشنل کمشنر آفتاب احمد، ایس ڈی او ایجوکیشن ارشد خان، ٹی ایم او جہانگیر خان، ریسکیو 1122کے سنٹر انچارج ہارون خان، بار ایسوسی ایشن کے صدر قمر زمان کان ایڈوکیٹ کے علاوہ ناظمین، کونسلران اور تاجروں نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔ انہون نے کاہ کہ عوام صحت و صفائی کا خاص خیلات رکھیں، جگہ جگہ پانی کھڑا ہونے نہ پائیں، کیونکہ ڈینگی کا مچھر صبح اور شام کے وقت صاف پانی میں رہتا ہے، انہوں نے کہا کہ حکومتی ادارے اپنے استعداد کے مطابق سرگرم عمل ہیں تاہم عوام کے تعاون یہ سے ہر قسم کے حالات کا مقابلہ کر سکتے ہیں ، انہوں نے کہا کہ ڈینگی کے ساتھ ساتھ قربانی کے لیے لانے والے جانور میں اکثر کانگو وائرس آتی ہے اس کی تدارک کے لیے شعور اجاگر کریں ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر