کراچی میں 3لاکھ سے زائد رجسٹڈ ووٹرز کا اضافہ ہوا ہے :علی اصغر سیال

کراچی میں 3لاکھ سے زائد رجسٹڈ ووٹرز کا اضافہ ہوا ہے :علی اصغر سیال

کراچی (اسٹاف رپورٹر) کراچی میں 3لاکھ سے زائد رجسٹرڈ ووٹرز کا اضافہ ہوا ہے ۔شہر کے ضلع وسطی میں ووٹرز کی تعداد سب سے زیادہ جبکہ رقبے کے لحاظ سے سب سے بڑے ضلع ملیر میں سب سے کم ووٹرز ہیں ۔ووٹرز ایجوکیشن پروگرام کے تحت تمام اضلاع میں سرگرمیوں کا انعقاد کیا گیاہے ۔نادرا کو کہا ہے کہ شناختی کارڈز کے اجرا کے نظام کو بہتر کریں۔نادرا شناختی کارڈ کے بغیر ووٹ کا اندراج نہیں ہوسکتا ہے ۔تمام اسٹیک ہولڈرز کو ساتھ لیکر ووٹرز ٹرن آؤٹ کو بڑھایا جائے گا ۔یہ بات ریجنل الیکشن کمشنر علی اصغر سیال اور ڈسٹرکٹ الیکشن کمشنر تابندہ اخلاق نے بدھ کو کراچی پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتائی ۔انہوں نے بتایا کہ عام انتخابات 2018کی تیاریوں کا سلسلہ جاری ہے ۔کراچی کے 6 اضلاع میں ووٹرز کی تعداد 75 لاکھ سے تجاوز کرگئی ہے ۔انہوں نے کہا کہ کراچی میں کل75لاکھ 74ہزار 797ووٹرز رجسٹرڈ ہیں جن میں مرد ووٹرز کی تعدادا43لاکھ 29ہزار 972جبکہ خواتین کی تعداد 32لاکھ 44ہزار 825 ہے ۔کراچی کے ضلع جنوبی میں 109123ووٹر ہیں جن میں 5لاکھ 65ہزار 979مرد اور 4لاکھ 43ہزار 144خواتین شامل ہیں ۔ضلع غربی میں مجموعی طور پر 15لاکھ 33ہزار 226ووٹر ز میں 9لاکھ 31ہزار 942مرد اور 6لاکھ ایک ہزار 284خواتین ہیں ۔ضلع وسطی میں ووٹرز کی تعداد 1776099ہے جن میں مردووٹر9لاکھ 91ہزار 13جبکہ خواتین کی تعداد 7لاکھ 85ہزار 86 ہے ۔ضلع شرقی میں 13لاکھ 59ہزار 909ووٹرز میں 7لاکھ 47ہزار 611مرد اور 6لاکھ 12ہزار298خواتین شامل ہیں ۔ضلع ملیر میں کل ووٹرز کی تعداد 6لاکھ 89ہزار 759ہے ۔ان میں 4لاکھ 5ہزار 843مرد اور 2لاکھ 83ہزار 916خواتین ووٹرز شامل ہیں ۔ضلع کورنگی میں مجموعی طور پر 12لاکھ 6ہزار 681ووٹرز رجسٹرڈ ہیں ،جن میں 6لاکھ 87ہزار 584مرد اور 5لاکھ 19ہزار 97خواتین ووٹرز ہیں ۔انہوں نے کہا کہ کراچی کے ضلع وسطی میں ووٹرز کی تعداد سب سے زیادہ جبکہ رقبے کے لحاظ سے سب سے بڑے ضلع ملیر میں سب سے کم ووٹرز ہیں ۔ووٹرز ایجوکیشن پروگرام کے تحت تمام اضلاع میں سرگرمیوں کا انعقاد کیا گیاہے ۔تمام اسٹیک ہولڈرز کو ساتھ لیکر ووٹرز ٹرن آؤٹ کو بڑھایا جائے گا ۔انہوں نے بتایا کہ کراچی میں تین لاکھ سے زائد مرد وخواتین ووٹرز کا اضافہ ہوا ہے ۔انہوں نے کہا کہ خواجہ سرا ووٹرلسٹ میں نام کے اندراج میں تعاون نہیں کررہے ہیں ۔خواجہ سرا کہتے ہیں کہ نادرا شناختی کارڈ جاری نہیں کرتا ہے ۔ نادرا کو کہا ہے کہ شناختی کارڈز کے اجرا کے نظام کو بہتر کریں۔نادرا شناختی کارڈ کے بغیر ووٹ کا اندراج نہیں ہوسکتا ہے ۔ ہمارا ہدف عام انتخابات میں ووٹرز ٹرن آؤٹ بڑھانا ہے۔انہوں نے کہا کہ معذور افراداورخواتین ووٹرز کے اندراج میں اضافہ ہوا ہے ۔ضلع شرقی کے33 سینسز بلاکس میں ووٹرز کا اندراج کم تھا۔اب ان بلاکس میں خواتین کے ووٹ کا اندراج بڑھایا ہے

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر