غریب گھرانوں کی خواتین کو ملازمت کا جھانسہ دے کر فروخت کرنے کا انکشاف

غریب گھرانوں کی خواتین کو ملازمت کا جھانسہ دے کر فروخت کرنے کا انکشاف
غریب گھرانوں کی خواتین کو ملازمت کا جھانسہ دے کر فروخت کرنے کا انکشاف

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

شیخوپورہ (ویب ڈیسک) شیخوپورہ میں غریب گھرانوں کی خواتین کو کھاتے پیتے گھرانے میں گھریلو ملازمہ کو رکھوانے کی آڑ میں ان کو اغوا کرکے فروخت کرنے کا انکشاف ہوا ہے، یہ گروہ خوبرو خواتین کی غربت اور بے چارگی کا فائدہا ٹھا کر انہیں اچھی مراعات دلانے کا جھانسہ دے کر گھرون میں ملازمت پر راضی کرنے کے بعد انہیں جسم فروشی پر مجبور کردیا جاتا ہے اور لاکھوں روپے کے عوض فروخت کیا جاتا ہے، بعض کو بیرون ملک بھی بھیجا جاتا ہے جو چاچوکے کے محنت کش اشرف کی بیوی یاسمین کوثر اور جواں سالہ بیٹی عطیہ بی بی بھی ایسے ہی گروہ کے ہتھے چڑھ گئیں اور گزشتہ 2ماہ سے غائب ہیں، جنہیں منظم گروہ کے ملزم تنویر حسین اور اس کی بیوی نازیہ نے شیخوپورہ میںا یک کوٹھی میں 15 ہزار روپے ماہوار تنخواہ اور روٹی کپڑا دینے کا وعدہ دے کر چاچوکی سے شہر لے آئے اور اس دوران محنت کش اشرف نے ملزم تنویر حسین سے رابطہ کرکے اپنی بیوی اور بیٹی سے ملاقات کروانے کو کہا تو ملزم حیلے بہانوں سے کام لیتا رہا۔

مزید : شیخوپورہ