ڈپٹی چیئر مین سینیٹ 2013سے ابتک دہشت گردی کیخلاف جنگ میں ملنے والی غیر ملکی امداد کی تفصیلات ایوان میں پیش نہ کرنے پر برہم

ڈپٹی چیئر مین سینیٹ 2013سے ابتک دہشت گردی کیخلاف جنگ میں ملنے والی غیر ملکی ...
ڈپٹی چیئر مین سینیٹ 2013سے ابتک دہشت گردی کیخلاف جنگ میں ملنے والی غیر ملکی امداد کی تفصیلات ایوان میں پیش نہ کرنے پر برہم

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سینیٹ اجلاس میں وقفہ سوالات کے دوران ڈپٹی چیئر مین عبدالغفور حیدری 2013سے ابتک دہشت گردی کیخلاف جنگ میں ملنے والی غیر ملکی امداد کی تفصیلات پیش نہ کرنے پر برہم ہوگئے اور ریمارکس دیئے کہ آج امریکہ ہمیں جتلا رہا ہے کہ اس نے دہشت گردی کیخلاف لڑنے کیلئے پاکستان کو فنڈز دئیے،حکومت کی جانب سے اس حوالے سے تمام تفصیلات ایوان میں پیش کی جانی چاہئیں تھیں تاکہ قوم کو تمام حقائق جان سکے مگر حکومت کی جانب سے جواب نہ دینا سمجھ سے بالاتر ہے۔

تفصیلات کے مطابق امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے ایوان بالا کے اجلاس میں سوال کرتے ہوئے  کہا کہ ڈونلڈ ٹرمپ آج ہمیں اسی حوالے سے دھمکیاں دے رہا ہے،اس سوال میں ایسی کیا معلومات تھیں جو حکومت اس کا جواب دینے گریزاں ہے؟کچھ راز ایسے ہیں جو حکومت ہمیں نہیں بتانا چاہتی۔ اس موقع پر قائد ایوان راجہ ظفر الحق نے کہا کہ ایسی کوئی بات نہیں جو چھپائی جا رہی ہے،یہ سوال وزارت داخلہ سے پوچھا گیا ہے مگر وزارت داخلہ کا اس سوال سے کوئی تعلق نہیں،بیرون ممالک سے ملنے والی امداد وزارت خزانہ کے پاس آتی ہے،سوال کے جواب میں درج ہے کہ سوال وزارت خزانہ کو منتقل کر دیا گیا ہے میں ایوان کو یقین دلاتا ہوں کہ آئندہ اجلاس میں سوال کا مکمل جواب دیدیا جائیگا۔جس پر ڈپٹی چیئرمین سینیٹ مولانا عبد الغفور حیدری نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ایوان میں ایسی تمام تفصیلات پیش کی جانی چاہئیں تھیں  تاکہ قوم کو تمام حقائق جان سکے مگر حکومت کی جانب سے جواب نہ دینا سمجھ سے بالاتر ہے۔

مزید : قومی