ایم سی بی بینک کی 70ویں سالگرہ پر جدید ترین 3D پروجیکشن میپنگ سسٹم کا آغاز

ایم سی بی بینک کی 70ویں سالگرہ پر جدید ترین 3D پروجیکشن میپنگ سسٹم کا آغاز

لاہور(پ ر)پاکستان کے سب سے بڑے اور جدید ترین بینکوں میں سے ایک ایم سی بی بینک نے ایم سی بی سینٹر ، لاہور میں 3D پروجیکشن سسٹم کا آغاز کیا۔پروجیکشن کی رونمائی کے دوران پاکستان کی 70 ویں جشنِ آزادی سے متعلقہ بے شمارحب الوطنی پر مشتمل تحریکِ پاکستان کی نامور شخصیات کی تصاویرکو دکھایا گیا، 3D انیمیشنز، اُستاد نصرت فتح علی خان کا گایا ہوا ایم سی بی کا ترانہ اور دیگر کئی ویڈیوز ایم سی بی سینٹر کی بلڈنگ میں دکھائی گئیں جو کہ میلوں دور سے دیکھی جاسکتی تھیں۔ایم سی بی بینک کے سی آئی او فیصل اعجاز خان نے 3D پروجیکشن سسٹم کے متعلق بات کرتے کہا کہ ’’3D پروجیکشن سسٹم نے ہمیں ایک نیا پلیٹ فراہم کیا ہے جس سے ہم بینک کے کارپوریٹ امیج کو بڑھا نے، پروڈکٹ کی تشہیری مہم اور عوامی وضاحتی یا معاشرتی مسائل سے آگاہی کے ضمن میں استعمال کرسکتے ہیں۔ایم سی بی اپنے صارفین سے رابطے کو وسعت دینے کے لیے ایسے ڈیجیٹل مارکیٹنگ کے ذرائع بروئے کار لا رہا ہے جو پہلے ممکن نہ تھے۔ یہ اقدام بینک کی ان کوششوں کی طرف ایک پیش رفت ہے جس سے ڈیجیٹل بینکنگ کی خدمات کو فروغ دیا جائے۔‘‘ایم سی بی بینک کے سیکیورٹی اینڈ مارکیٹنگ گروپ کے سربراہ حسن نواز تارڑ نے نئی ٹیکنالوجی اور اس کی استعداد کے متعلق بات کرتے ہوئے کہا ’’3D میپنگ ٹیکنالوجی آرٹ اور آرکیٹیکچر کا امتزاج ہے جو زبان سے اداکردہ الفاظ اور مضبوط برانڈکی واپسی کی وسیع استعداد رکھتی ہے۔ ہم اس ابھرتی ہوئی ٹیکنالوجی کو ہماری خاص مارکیٹنگ کے اقدامات سے آگاہی کے لیے ایک منفرد اور جدید ترین انداز میں استعمال میں لانے کا ارادہ رکھتے ہیں۔ 3D پروجیکشن میپنگ ٹیکنالوجی کا استعمال اہداف کو سطحی طور پر ظاہر کرنے کے لیے ویڈیو پروجیکشن کے طور پر بھی جانا جاتا ہے۔سپر ہائی ڈیفی نیشن پروجیکٹرز کے استعمال، مخصوص سافٹ ویئر،دو، تین سمتوں پر مشتمل ہدف کی حرکات کو ورچوئل پروگرام سے مرتب کیا جاتا ہے جو اصل ماحول کی عکاسی کرتا ہے۔ یہ طریقہ کار عمومی طور پر ماہرین اور مارکیٹ سے وابستہ اضافی سمتوں کے اضافے، بصری تصورات اور گذشتہ شماریاتی اہداف میں تبدیلی کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔

مزید : کامرس