الیکشن کمیشن ارکان کی تقرری آئین کے مطابق،چیف الیکشن کمشنر کے پاس حلف لینے سے انکار کا اختیار نہیں،،فردوس عاشق اعوان

الیکشن کمیشن ارکان کی تقرری آئین کے مطابق،چیف الیکشن کمشنر کے پاس حلف لینے ...
الیکشن کمیشن ارکان کی تقرری آئین کے مطابق،چیف الیکشن کمشنر کے پاس حلف لینے سے انکار کا اختیار نہیں،،فردوس عاشق اعوان

  


اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ حکومت کی جانب سے الیکشن کمیشن میں سندھ اور بلوچستان سے دو نئے ارکان کی تقرری آئین میں درج طریقہ کار کے تحت کی گئی،آئین کے تحت چیف الیکشن کمشنر کے پاس ان کا حلف لینے سے انکار کا اختیار نہیں،دونوں ارکان دیانتدار اور قانون کے ماہر سمجھے جاتے ہیں۔

واضح رہے کہ حکومت اور اپوزیشن میں سندھ اور بلوچستان الیکشن کمیشن کے ارکان کی تقرری پر اتفاق رائے نہیں ہوسکا تھا جس پر صدر مملکت نے اپنے اختیارات استعمال کرتے ہوئے سندھ اور بلوچستان الیکشن کمیشن کے 2 ارکان کی تقرری کردی تھی جس پر چیف الیکشن کمشنر نے ان سے حلف لینے سے انکار کردیا تھا۔

معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر پوسٹ شیئر کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت کی جانب سے الیکشن کمیشن میں سندھ اور بلوچستان سے دو نئے ارکان کی تقرری آئین میں درج طریقہ کار کے تحت کی گئی،آئین کے تحت چیف الیکشن کمشنر کے پاس ان کا حلف لینے سے انکار کا اختیار نہیں،دونوں ارکان دیانتدار اور قانون کے ماہر سمجھے جاتے ہیں۔

فردوس عاشق اعوان کا مزید کہناتھا کہ ملک بھر سے تمام بار ایسوسی ایشنز اور کونسلزنے بھی ان کی تقرری کی حمایت کی ہے۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد


loading...