احتساب مذاق بن چکا، جنہیں کٹہرے میں ہونا چاہیے تھا وہ بر سراقتدر ہیں: سراج الحق 

احتساب مذاق بن چکا، جنہیں کٹہرے میں ہونا چاہیے تھا وہ بر سراقتدر ہیں: سراج ...

  

  لاہور(این این آئی)امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہاہے کہ حکومت نے احتساب کو مذاق بنا کر اپنے دعویٰ احتساب کا خانہ خراب کردیاہے، جن کو کٹہرے میں ہونا چاہیے تھا وہ اقتدار میں ہیں، قوم کو صرف وعدوں سے بہلانے کا وقت گزر چکا،جن لوگوں نے ملک کو لوٹا تھا نیب اب تک ان سے ایک روپیہ بھی نہیں نکلوا سکا، جماعت اسلامی نے ملک میں بے لاگ احتساب کے لیے ایک طویل تحریک چلائی جس میں کرپشن کے 150میگا اسکینڈلز میں ملوث لوگوں اور پانامہ لیکس کے 436 ملزموں کے احتساب کا مطالبہ کیا گیا لیکن آج تک نیب نے ان کو پوچھا تک نہیں اور حکومت نے احتساب کے اس پورے معاملے کو سیاست کی نظر کردیا۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے منصورہ میں سید مودودیؒ میموریل ٹرسٹ کی انتظامی کمیٹی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ۔سراج الحق نے کہا کہ اب نیب فیصلے بعد میں دیتاہے پہلے وزراء اس کا اعلان کر دیتے ہیں کہ یہ فیصلہ ہونے والا ہے۔ جماعت اسلامی نے دنیا بھر میں موجود احباب کی دیرینہ خواہش پر سید مودودیؒ میموریل ٹرسٹ کے قیام کا فیصلہ کیاہے جس میں سید مودودی ؒ کی تصانیف، ان پر لکھی گئی کتب پر مشتمل ایک ریسرچ لائبریری، ایک میوزیم اور سید مودودی ؒ پر دنیا بھر میں ہونے والے ریسرچ ورک کو جمع کیا جائے گا۔ جماعت اسلامی نے موجودہ صدی کو سید مودودی ؒ سے منسوب کیا ہے۔ سید مودودی نے احیائے دین، اسلام کی تبلیغ و اشاعت اور اتحاد امت کے لیے گرانقدر خدمات سر انجام دی ہیں جن کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا۔

سراج الحق

مزید :

صفحہ آخر -