اسرائیل کی سلامتی عزیز، امریکہ کا ایرا ن پر دوبارہ پابندیوں کے نفاذ کیلئے سفارتی کوششیں تیز کر نے کا عندیہ

اسرائیل کی سلامتی عزیز، امریکہ کا ایرا ن پر دوبارہ پابندیوں کے نفاذ کیلئے ...

  

 واشنگٹن (نیوزایجنسیاں)امریکی محکمہ خارجہ کی خاتو ن ترجما ن مورگن اورٹاگس نے کہا ہے کہ امریکا ایرا ن کیخلاف اسلحہ کی پابندی کے دوبارہ نفاذ کیلئے آئندہ ماہ سفارتی کوششیں تیز کردے گا کیو کہ ایرا ن کا کردار یہ ظاہر کررہا ہے کہ اگر اس پر پابندیوں میں توسیع نہیں کی جاتی ہے تو اس کو اکتوبر میں روایتی اسلحہ خرید نے کا موقع مل جائے گا۔ عرب ٹی وی کوا نٹرو یومیں ترجما ن مورگ ن اورٹاگس نے کہا کہ ایرا ن کو ایک شا ندار موقع مہیا کیا گیا تھا لیکن اس نے یہ موقع ضائع کردیا،چنانچہ آج اسی وجہ سے ہمیں یہ د ن دیکھنا پڑرہے ہیں۔ ایرا ن میں نظام کے برتاؤ میں کوئی تبدیلی رو نما نہیں ہوئی۔ا نھیں اکتوبر میں روایتی ہتھیار خرید نے کا حق حاصل نہیں ہو نا چاہیے۔ترجما ن نے ایرا ن سے طے شدہ جوہری سمجھوتے (مشترکہ جامع لائحہ عمل)پر بھی تنقید کی اور کہا کہ اس کی بدولت ایرا ن کو اربوں ڈالر تک رسائی مل گئی تھی۔ا نہوں نے کہا کہ ہم نے ہمیشہ درست اقدامات کیے ہیں اورہم امریکی شہریوں، خلیج میں اپنے اتحادیوں اور اسرائیل کیلئے جو بہتر ہوگا، وہ کریں گے۔ ایرا ن خطے میں جو بھی حملہ کرتا ہے تو اس کا پہلا ہدف جی سی سی ممالک ہی ہوتے ہیں۔ہم اس بات کو بخو بی جا تے ہیں کہ مشرقِ اوسط بالخصوص خلیج کی سلامتی اور استحکام کے لیے کیا بہتر ہے،اسی لیے ہم ا ن کی حمایت کررہے ہیں۔دوسری جا نب متحدہ عرب امارات اور اسرائیل کے درمیا ن امن معاہدے کے بعد امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو دو نوں ملک کے دورے پر آج تل ابیب پہنچیں گئے جہاں سے وہ متحدہ عرب امارات بھی جائیں گے۔ امریکی وزیر خارجہ کے اس اہم دورے کو مشرق وسطی میں نئی سیاسی پیشرفت کا باعث بننے والے اسرائیل اور متحدہ عرب امارات کے درمیا ن امن معاہدے کے تناظر میں دیکھا جا رہا ہے۔اسرائیل اور یو اے ای کے درمیا ن معاہدے کے بعد تل ابیب کا دورہ کر نے والے وزیر خارجہ مائیک پومپیو امریکا کے پہلے سرکاری عہدیدار ہوں گے۔ امریکی وزیر خارجہ کے دورے کے ایجنڈے پر مشرق وسطی میں ایرا ن اور چین کی جا نب سے مبینہ مداخلت اور سیکیورٹی خدشات بھی شامل ہیں۔

مزید :

صفحہ اول -