سرکاری اراضی پر مبینہ پٹرول پمپ کی تعمیر‘ اینٹی کرپشن نے ریکارڈ مانگ لیا

   سرکاری اراضی پر مبینہ پٹرول پمپ کی تعمیر‘ اینٹی کرپشن نے ریکارڈ مانگ لیا

  

 وہاڑی(بیورورپورٹ،نامہ نگار)وی چوک کے قریب شارع بند کر کے پیٹرول پمپ تعمیر کرنے والوں کے گرد گھیرا تنگ اینٹی کرپشن حکام نے محکمہ مال سے متنازعہ پیٹرول پمپ اور سرکاری اراضی کا ریکارڈ طلب کر لیا با اثر پیٹرول (بقیہ نمبر7صفحہ6پر)

پمپ مالکان کروڑوں روپے کی سرکاری اراضی پکی کرنے کے لئے سیاسی اثرو سوخ استعمال کرنے لگے واضح رہے وہاڑی کے وی چوک کے قریب 55 فٹ کا روڑ جو کہ سیدھا میاں چنوں کی طرف نکلتا ہے اس روڑ کو بند کر کے بااثر افراد نے غیر قانونی پیٹرول پمپ تعمیر کر کے کروڑوں روپے کی سرکاری اراضی پر ناجائز قبضہ کر رکھا ہے روڑ بند ہونے کی وجہ سے عوام کو شدید دشواری کا سامنا کرنا پڑتا ہے اسسٹنٹ کمشنر وہاڑی احمد نوید بلوچ نے مذکورہ پیٹرول پمپ کو سیل کر دیا تھا لیکن مبینہ طور پر مال کی چمک کی وجہ سے دوبارہ ڈی سیل کر دیا گیا اس معاملہ بارے اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ حکام نے ایکشن لیتے ہوئے محکمہ مال کے افسران سے رپورٹ طلب کر لی ہے سرکل آفیسر اینٹی کرپشن شاہد نزیر وڑایچ نے بتایا کہ اس معاملہ بارے بہت ساری شکایت آئی ہیں عوامی ایشو ہے اگر سرکاری اراضی پر قبضہ ثابت ہوا تو پیٹرول پمپ کی عمارت گرا کر عوام کے لئے 55 فٹ سڑک کھول دی جائے گی شہریوں نے اعلیٰ حکام سے کروڑوں روپے کی سرکاری اراضی پر قبضہ کرنے والے بااثر مافیا کے خلاف نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

مانگ لیا

مزید :

ملتان صفحہ آخر -