بداخلاقی کے ملزمان کو قرار واقعی سزا دینے کا مطالبہ

بداخلاقی کے ملزمان کو قرار واقعی سزا دینے کا مطالبہ

  

 پبی (نما ئندہ پاکستان)نوشہرہ پولیس 06 سالہ بچے کیساتھ اجتماعی زیادتی کرنے والے دونوں ملزمان  کو قرار واقع سزا دینے کیلئے تفتیش پر بھر پور توجہ دے رہی ہے۔متاترہ خاندان کا پولیس کی تفتیش پر اعتماد کا اظہار21  اگست 2020 کو مسماۃ(گل)ساکن میٹھاخیل رشکئی نے پولیس کو رپورٹ درج کروائی کہ کل میرے 06 سالہ بیٹے ذیشان کیساتھ دو ملزمان نے اجتماعی زیادتی کی ہے۔رپورٹ میں دیری صلح مشورہ کرنے کی وجہ سے ہوئی جس پر فوری طور پر مقدمہ نمبر 432مورخہ 21-08-2020 جرم 377PPC/50-53CPA تھانہ رسالپور درج کیا گیا۔اور متاثرہ بچے کو میڈیکل چیک اپ کیلئے روانہ کیاڈسٹرکٹ پولیس افیسر کیپٹن(R)نجم الحسنین نے اس واقع کا نوٹس لیتے ہوئے ASPکینٹ بلال احمد کی سربراہی میں نیک زمان خان SHO رسالپور اور کاشفخان SI پر مشتمل ٹیم تشکیل دیکر ملزمان کی گرفتاری کا ٹاسک حوالہ کیاتفتیشی ٹیم نے اپنی پیشہ وارانہ صلاحیتوں کو بروئے کار لاتے ہوئے ملزمان عبداللہ ولد محمد جان اور عرفان اللہ ولد نور خان ساکنان میٹھا خیل رشکئی کو گرفتار کر لیاملزمان کو جوڈیشل مجسٹریٹ فوزیہ نسیم کی عدالت میں پیش کیا گیا۔جہاں پرایک ملزم نے اپنے گھناونے جرم کا اعتراف کر لیاڈسٹرکٹ پولیس افیسر نے کیس کے حوالے سے بیان دیتے ہوئے کہا کہ اس طرح کے کیسز کی تفتیش باریک بینی سے کی جارہی ہے تاکہ ملزمان کو قرار واقع سزائیں دی جا سکیں نوشہرہ پولیس متاثرہ خاندان سے مسلسل رابطے میں ہے۔متاثرہ خاندان کا پولیس کے تفتیش اور کاروائی پر بھر پور اعتماد کا اظہار۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -