بیروت دھماکوں میں جاں بحق فائر فائٹر کی نماز جنازہ میں شرکت کیلئے جانے والے سٹار فٹبالر اندھی گولی کا نشانہ بن گئے 

بیروت دھماکوں میں جاں بحق فائر فائٹر کی نماز جنازہ میں شرکت کیلئے جانے والے ...
بیروت دھماکوں میں جاں بحق فائر فائٹر کی نماز جنازہ میں شرکت کیلئے جانے والے سٹار فٹبالر اندھی گولی کا نشانہ بن گئے 

  

بیروت (ڈیلی پاکستان آن لائن )لبنان کے سٹار فٹبالر محمد احمد عتوی اندھی گولی کا نشانہ بن گئے۔

عرب خبر رساں ادارے کے مطابق فٹبالر محمد احمد عتوی بیروت دھماکوں میں جاں بحق ہونے والے فائر فائٹر کے نماز جنازہ میں شریک تھے کہ اس دوران اچانک گولی ان کے سر میں آلگی جس سے وہ شدید زخمی ہوگئے۔عرب میڈیا کا بتانا ہے کہ جنازے کے دوران فائرنگ سے متعدد افراد زخمی ہوئے جنہیں فوری طبی امداد کے لیے قریبی ہسپتال منتقل کیا گیا۔

عرب میڈیا کے مطابق فائرنگ کا واقعہ کوئی دہشت گردی نہیں بلکہ شادی اور جنازے سمیت دیگر بڑی تقریبات کے دوران ہوائی فائرنگ لبنان کی ثقافت ہے جس کی وجہ سے جنازے میں بھی بڑے پیمانے پر فائرنگ ہوئی اور کئی افراد اندھی گولیوں کا نشانہ بنے۔

عرب میڈیا کے مطابق 27 سالہ فٹبالر محمد احمد کو انتہائی تشویشناک حالت میں اسپتال منتقل کیا گیا تھا جہاں ڈاکٹرز نے فوری آپریشن کرکے گولی نکالی تاہم اندرونی طور پر خون بہنے کی وجہ سے ان کی حالت تشویشناک ہے۔عرب میڈیا کے مطابق ڈاکٹرز کا کہنا ہےکہ محمد احمد عتوی کو پانچ گھنٹے کے آپریشن کے بعد آئی سی یو منتقل کردیا گیا ہے جہاں ان کی حالت پہلے سے کچھ بہتر ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -