بھارت میں مسلمانوں کا قتل عام بند کیا جائے:ڈاکٹر سلیم حیدر

بھارت میں مسلمانوں کا قتل عام بند کیا جائے:ڈاکٹر سلیم حیدر

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر)مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے نے کہا ہے کہ بھارت میں رہنے والے 25کروڑ مسلمانوں کو 72 سال قبل پاکستان بنانے کی سزا دی جارہی ہے۔ بھارت کے وحشی اور درندے حکمرانوں نے بھارتی مسلمانوں پر عرصہ حیات تنگ کیا ہو اہے۔ پاکستان کے وزیراعظم اس صورتحال پر خاموشی اختیار کئے ہوئے ہیں، بھارت کو مسلمانوں پر کی جانے والی جارحیت کا حساب چکانا ہوگا۔ انہوں نے کہاکہ نریندر مودی جو گجرات کے قتل عام کا مین کردار ہے اس نے ایک مرتبہ پھر بھارت میں مسلمانوں کے ساتھ گجرات کے قتل عام کی تاریخ دہرانا شروع کردی ہے۔ آر ایس ایس کے غنڈوں کو کھلی چھٹی دیدی گئی ہے جو مسلمانوں کے گھروں اور تعلیمی اداروں میں داخل ہوکر معصوم بچیوں اور بے گناہ افراد کے خون سے ہولی کھیل رہے ہیں اور ان کے ساتھ زیادتی کی جارہی ہے لیکن بدقسمتی سے ہمارے حکمران اس ساری صورتحال پر اپنا کوئی کردار ادا نہیں کررہے ہیں۔ بھارت میں رہنے والے مسلمانوں سے ہمارا خون کا رشتہ ہے اور ان پر ہونے والے ظلم پر ہمارا دل خون کے آنسو روتا ہے۔ ہم اس صورتحال پر خاموش نہیں رہ سکتے یا تو حکومت عملی اقدام کرے ورنہ پھر سندھ کے مہاجر بھارت کے خلاف بھرپور تحریک چلائیں گے۔ انہوں نے کہاکہ بھارت کی مختلف ریاستوں نے ہر روز تشدد، ظلم اور زیادتی میں اضافہ ہوتا جارہا ہے۔ اب تک درجنوں مسلمانوں کو شہید کیا جاچکا ہے، مسلمانوں کے ساتھ نسلی امتیاز کا سلوک کیا جارہا ہے لیکن عالمی ادارے اور انسانی حقوق کی تنظیمیں تعصب کا مظاہرہ کرتے ہوئے خاموشی اختیار کئے ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ بھارتی مسلمانوں کو پاکستان بنانے کی سزا دی جارہی ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...