سینیٹ قائمہ کمیٹی داخلہ کا  اجلاس،نیکٹا ترمیمی بل پر غور موخر

      سینیٹ قائمہ کمیٹی داخلہ کا  اجلاس،نیکٹا ترمیمی بل پر غور موخر

  



 اسلام آباد (این این آئی)سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے داخلہ نے نیکٹا ترمیمی بل پر غور موخر کردیا۔ پیر کو قائمہ کمیٹی برائے داخلہ کا اجلاس سینیٹر رحمن ملک کی زیر صدارت ہوا جس میں نیکٹا ترمیمی بل پر غور موخر کردیا۔ اجلاس کے دور ان نیکٹا ترمیمی بل سینیٹر شیخ عتیق نے ایوان میں پیش کیا جسے انہوں نے اب واپس لے لیا۔ کمیٹی میں سی ڈی اے کی طرف سے اسلام آباد میں گرائے گئے کھوکھوں کا معاملہ زیر بحث آیا، کمیٹی نے سفارش کی کہ جن لوگوں کے پاس اجازت نامے ہیں ان کے کھوکھے بند نہ کئے جائیں۔رحمن ملک نے کہاکہ کھوکھے گرانے سے غریب لوگ بے روزگار ہو رہے ہیں۔کمیٹی نے سی ڈی اے کو سینیٹری ورکز کو کرسمس سے قبل تنخواہوں کی ادائیگی یقینی بنانے کی ہدایت کر دی۔ سینیٹر رحمان ملک نے سی ڈی اے اور ایم سی آئی کے تنازع کو حل کرنے کے لیے سینیٹر جاوید عباسی اور سینیٹر عتیق شیخ کو ذمہ داری سونپ دی۔ سینیٹر رحمن ملک نے کہاکہ ایم سی آئی کے پیسے دئیے جائیں تاکہ وہ سینیٹری ورکرز کو تنخواہیں دے سکیں۔ آئی جی پنجاب پولیس نے کہاکہ قصور کا واقعہ صرف قصور تک محدود نہیں،یہ پورے ملک میں ہے، آئی جی پنجاب نے کہاکہ ہم نے پنجاب حکومت کو قانون میں ترامیم کی درخواست کی ہے عدلیہ سے بھی ملاقاتیں کی ہیں۔ زاہد نواز نے کہاکہ ایک کیس کی تحقیقات میں چوبیس کروڑ سے زائد کا پیسہ خرچ ہوا ہے۔

قائمہ کمیٹی اجلاس

مزید : صفحہ آخر


loading...