مارکیٹنگ ایسوسی ایشن لاہور چیپٹر کا اجلاس‘ نیاز ملک کی گفتگو

        مارکیٹنگ ایسوسی ایشن لاہور چیپٹر کا اجلاس‘ نیاز ملک کی گفتگو

  



لاہور (پ ر)مارکیٹنگ ایسوسی ایشن آف پاکستان لاہور چیپٹر کا اجلاس 19 دسمبر کو کلچرل ہال پی سی ہوٹل میں منعقد ہوا جس میں نیاز ملک نے ”انسانی  ارتقاء اور مارکیٹنگ پر پیشرفت، ماضی اور مستقبل“ پر گفتگوکی۔بھرپور اور فعال سیشن میں شرکاء کو واضح بیانیہ پیش کیا گیا جبکہ پیداواریت، شرح نمو اور ان کے متعلقہ اداروں کی مارکیٹنگ کے تناظر میں زیادہ سے زیادہ محاذوں پر کامیابی کیلئے شرکاء کے ذہنوں پر گہرے اثرات مرتب کئے گئے۔گفتگو کا دائرہ کار انسانی وجود سے لے کر اب تک مارکیٹ کی عظیم کامیابیوں پر مشتمل رہا۔ نیاز ملک نے  حالیہ برسوں کے کے دوران عدم استحکام کے تناظر میں وضاحت کی جس میں مارکیٹنگ کمیونٹی  نے انسانی شعبوں میں پیشرفت کیلئے  مارکیٹ کی تمام  حرکیات کو بروئے کار لانے کو یقینی بنانے کیلئے  ثابت قدمی اور واضح سمت برقرا رکھی۔مباحثہ کے دوران مارکیٹ میں ابھرتے ہوئے مختلف رحجانات کے ساتھ ساتھ حالیہ صورتحال کو اجاگر کیاگیا۔نیاز ملک نے شرکاء کو ان  رحجانات کے بارے میں بتایا کہ وہ کس طرح  زیادہ سے زیادہ ترقی کیلئے اپنی کمپنیوں کی سٹریٹجک صورتحال کے ذریعے اپنے برانڈز اور اداروں میں پیشرفت کر سکتے ہیں۔ نیاز ملک کے مطابق ایشیائی مارکیٹوں سے بڑے مواقع پیداہوتے ہیں اور مارکیٹنگ کرنے والے مستقبل میں  ترقی کیلئے ان مواقع سے فائدہ اٹھا سکتے ہیں۔

مارکیٹنگ ایسوسی ایشن آف پاکستان لاہور چیپٹر مارکیٹنگ ڈیپارٹمنٹ میں نمایاں تبدیلی لایا جہاں مقررین نے مارکیٹ میں نئے رحجانات سے متعلق اپنے خیالات کا اظہارخیال کیا۔ نیاز ملک نے متحرک قوتوں پر زور دیا جو مارکیٹنگ کمیونٹی کے ساتھ ساتھ دنیا کو نئی شکل دیں گی۔ نیاز ملک نے محرک عناصر پر تبادلہ خیال کیا جو مارکیٹنگ کرنے والوں سے متعلق حالیہ صورتحال میں موجود ہیں اور نئے  راستوں کی تلاش کیلئے  فعال اور بھرپور عزم کے ساتھ ان پر کس طرح توجہ مرکوز کی جا سکتی ہے۔

انہوں نے ادارے میں فور جی ٹیکنالوجی میں سرمایہ کاری کے حوالہ سے وضاحت کی جس نے ہماری صنعت میں انقلاب برپا کر دیا ہے۔ انہوں نے شرکاء کے سامنے ثابت کیا کہ کس طرح ایک فرد مارکیٹوں کو نئی شکل دینے، نئی سوچ کے ساتھ کاروبار کے فروغ اور نئے مواقع کے حصول کیلئے راہ ہموار کرنے کیلئے چیلنجز سے نمٹنے  میں فرق پیدا کر سکتا ہے۔

مزید : کامرس


loading...