ارسلان ایش ای ایس پی این ای سپورٹس کے بہترین کھلاڑی قرار 

       ارسلان ایش ای ایس پی این ای سپورٹس کے بہترین کھلاڑی قرار 

  



لاہور(پ ر)ای۔سپورٹس کی دنیا میں ایک اور پرجوش سال اختتام کو پہنچا، 2019ء حقیقی طور پر ای ایتھلیٹ کے لئے ایک منفرد قسم کا سال تھا جس میں اس کے عروج نے بلندیوں کو چھوا۔ لاہور سے تعلق رکھنے والے 24 سالہ ٹیکن ارسلان ایش صدیقی نے ناقابل یقین کارکردگی کا مظاہرہ کیا اور رواں سال کے دوران انہوں نے EVO جاپان اور EVO یو ایس اے میں فتح حاصل کی۔ ان کی بڑے پیمانے پر فتوحات سے وہ  ای۔سپورٹس کی دنیا میں اعلیٰ مقام پر پہنچ گئے ہیں اور اب پاکستان سے باہر مقیم RED BULL ایتھلیٹ نے ای ایس پی این  ای۔سپورٹس پلیئر آف دی 2019ء کا ٹائٹل حاصل کرلیا ہے۔ ای ایس پی این کی آفیشل ویب سائٹ میں ارسلان ایش کی تعریف میں لکھا گیا ہے کہ ٹیکن میں ارسلان ایش کی برتری نے نہ صرف انہیں سپرسٹار بنایا بلکہ پاکستان بھی ای کھیلوں کے نقشے پر ابھر کر سامنے آیا ہے۔ ارسلان ایش کی جانب سے مشکلات پر قابو پانے اور TEKKEN میں 2019ء میں اعلیٰ ترین اعزاز حاصل کرنے کا چرچا ای سپورٹس سے بھی آگے ہے۔نوجوان TEKKEN ماسٹر بھی اپنے جذبات پر قابو نہیں رکھ سکے۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ سال جب میں نے اپنے عالمی کیریئر کا آغاز کیا، میں 2018ء ای ایس پی این پلیئر آف دی SONICFOX کا مداح تھا۔ تاہم اب یہ ناقابل یقین ہے کہ میں نے اپنے کیریئر پر عمل کیا اور ای ایس پی این ای سپورٹس 2019ء کا بہترین کھلاڑی بن گیا۔ای ایس پی این کی جیوری کے فیصلے کے علاوہ ارسلان ایش 60 فیصد ووٹوں کے ساتھ ٹویٹر پول جیت کر متفقہ، غیر متنازعہ، ”بیسٹ پلیئر آف دی 2019ء“ بن گئے ہیں۔ 2019ء کے ٹیکن کنگ نے کہا کہ بگھا جیسے دیگر مشہور ای۔ایتھلیٹس کے 6 اعداد پر مشتمل مداح ہیں جبکہ میرے مداحوں کی تعداد صرف 25 ہزار ہے، تاہم میرے مداحوں نے میری بھرپور سپورٹ کی اور اس پر میں ان کا شکر گذار ہوں۔

  ارسلان ایش کی ماں نے بڑی گیموں کے لئے اسے ذہنی طور پر تربیت دی اور ان کی مسلسل حوصلہ افزائی کرتی رہیں جس کے باعث لیجنڈ آگے بڑھتا گیا اور شہرت کی بلندیوں کو چھوا۔

 ریڈ بل کے ساتھ اپنے پہلے انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ میں ہمیشہ کامیابی کے حصول کے لئے آگے بڑھتا رہا، 10 سال قبل میرا خواب ایک لاکھ (پاکستانی) روپے اکٹھے کرنا تھا اور میرا دوسرا خواب پاکستان میں نمبر ون پلیئر بننا اور پھر پوری دنیا میں نمبر ون پلیئر بننا اور پاکستان کے لئے مسلسل دو Evos جیتنا تھا جسے میں نے مکمل کیا۔  اب جبکہ ارسلان ایش نے ای ایس پی این 2019ء کے پلیئر آف دی ایئر بننے کا ایک اور خواب پورا کرلیا ہے، دنیا ا ب اسے قر یب سے دیکھے گی کہ یہ  واحد پاکستانی آگے کیا کرسکتا ہے۔ اس وقت انہوں نے یقینی طور پر پوری دنیا کو اپنے ہاتھوں میں لیا ہوا ہے۔ 

OOO

مزید : کھیل اور کھلاڑی


loading...