پشاور پریمیئر لیگ یکم جنوری 2020ء سے شروع ہوگی

پشاور پریمیئر لیگ یکم جنوری 2020ء سے شروع ہوگی

  



پشاور(آئی این پی)خیبر پختونخوامیں کرکٹ کے حوالے سے ایک بڑاایونٹ پشاور پریمیئر لیگ یکم جنوری سے حیات آباد سپورٹس کمپلیکس پر شروع ہوگی،اس میگاایونٹ میں خیبر پختونخواسمیت ملک بھر کے ٹیسٹ اورانٹر نیشنل کرکٹرز12مختلف ٹیموں میں کھیلتے ہوئے ایکشن میں نظر آئینگے،پی پی ایل کے چیف پیٹرن ایم پی اے حاجی فضل الہی اور چیف ایگزیکٹیونواب خان نے کرکٹ لیگ کو کامیاب بنانے کیلئے مختلف کمیٹیاں تشکیل دیکر تیاریاں شروع کردی ہیں۔اس حوالے سے پشاور پریمیئر لیگ کے چیف پیٹرن ایم پی اے حاجی فضل الہی،چیف ایگزیکٹیونواب خان اور کوارڈی نیٹر عمر ان اللہ نے میڈیاسے گفتگوکرتے ہوئے اس عزم کا اظہارکیاکہ انشاء اللہ پی پی ایل پاکستان اور خصوصاًخیبر پختونخوامیں کرکٹ کے فروغ میں سنگ میل ثابت ہوگا۔

جس میں باصلاحیت جونیئرکھلاڑیوں سمیت ٹیسٹ اور انٹر نیشنل کرکٹرزایک ساتھ کھیلیں گے،پی پی ایل میں 12فرنچائزکی ٹیمیں ہونگی،جس میں ٹیسٹ کرکٹرمحمد رضوان،افتخار احمد،عمر آمین سمیت انٹر نیشنل کھلاڑی ذیشان ملک،ظفر گوہر،حارث رؤف،سلمان ارشادکے علاوہ کئی دیگر سٹارزکھلاڑی اس لیگ کا حصہ ہونگے،جس سے یقیناًپشاور میں انٹرنیشنل کرکٹرسرگرمیوں کی بحالی میں مددملے گی،انکاکہناتھاکہ اس میگاایونٹ کے انعقادمیں صوبائی حکومت مکمل تعاون کررہی ہے،جبکہ دیگر ادار وں نے بھی سرپرستی کیلئے رابطے شروع کردیئے ہیں،ایک سوال کے جوا ب میں چیف ایگزیکٹیونواب خان نے کہاکہ پشاو پریمیئر لیگ میں کشمیرکنگ،دھمال تندرراوالپنڈی،دیوان واریئرزصوابی،گل سٹارز،خیبر ازمری،پردیس اینڈکو،پشاور بادشاہ،جے آئی یوتھ،جے یو آئی یوتھ،آیان چیتا،سینٹالوکیہ زلمی قابل ذکر ہیں،لیگ سسٹم پر کھیلے جانیوالے ہر ٹیم 5,5میچزکھیلیں گے۔انہوں نے کہاکہ پی پی ایل کی کامیاب انعقادمیں پی ٹی آئی کے ایم پی اے آصف خان کا بھی ایک اہم رول ہے اسکے علاوہ دیگر حکام کی کاوشیں بھی لائق تحسین ہیں،جسے تاریخ میں سنہرے الفاظ میں لکھاجائیگا۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی