موسم سرما، کراچی میں گیس کا بحران شدت اختیار کر گیا

موسم سرما، کراچی میں گیس کا بحران شدت اختیار کر گیا

  



کراچی(اکنامک رپورٹر)موسم سرما میں سندھ میں گیس کی لوڈشیڈنگ اور پریشر میں کمی کا سلسلہ دراز ہوگیاہے جب کہ کراچی میں گیس کا بحران شدت اختیار کر گیا،گھریلو صارفین گیس پریشر کم ہونے کے باعث پریشانی میں مبتلا ہیں، جبکہ سی این جی اسٹیشنز کو آئے روز طویل دورانیے کی گیس کی بندش سے پبلک ٹرانسپورٹ کو شدید بحران کا سامنا ہے۔سندھ کے مختلف شہروں میں سردی بڑھنے سے گیس غائب ہوگئی جس سے صارفین کو شدید مشکلات کا سامنا ہے، سوئی گیس کی لوڈشیڈنگ اور پریشر میں کمی کے باعث کھانا پکانے میں پریشانی ہورہی ہے اور صارفین بلوں کی ادائیگی کے باوجود لکڑیاں جلانے پر مجبور ہیں۔کراچی میں بھی گیس کا بحران شدید ہوگیا ہے، گھریلوصارفین اور کمرشل سیکٹر کو گیس کی قلت کے باعث دشواری کا سامنا ہے، گھریلو صارفین کی طلب پوری کرنے کے لیے سندھ بھر میں سی این جی اسٹیشنز گزشتہ پانچ دن سے بند ہیں۔سوئی گیس کمپنی نے اعلان کیا تھا کہ پیر کی صبح آٹھ بجے تمام سی این جی اسٹیشن کھول دیے جائیں گے تاہم پیر کو بھی کو اسٹیشنزبند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔سی این جی کی بندش سے پبلک ٹرانسپورٹ کی کمی کے باعث شہریوں کو اپنی منزل پر پہنچنے میں مشکلات کا سامنا ہے اور وہ پرائیویٹ ٹرانسپورٹ پر بھاری کرایے ادا کرنے پر مجبور ہیں، شہریوں کی مجبوری سے فائدہ اٹھاتے ہوئے پبلک ٹرانسپورٹرز نے بھی کرایوں میں من مانہ اضافہ کردیا ہے۔دوسری طرف ایس ایس جی سی حکام کا کہنا ہے کہ گیس سسٹم میں کم پریشر کی وجہ سے سوئی سدرن کو گھریلو صارفین اور کمرشل سیکٹر کی طلب پوری کرنے میں انتہائی دشواری کا سامنا ہے۔

مزید : صفحہ اول


loading...