” ایک دن پرویزمشرف نے مجھے اور شہبازشریف کو کھانے پر بلایا، پھر کہنے لگے۔ ۔۔“چوہدری نثار کی پرانی ویڈیو وائرل، تہلکہ خیز انکشاف منظرعام پر

” ایک دن پرویزمشرف نے مجھے اور شہبازشریف کو کھانے پر بلایا، پھر کہنے لگے۔ ...
” ایک دن پرویزمشرف نے مجھے اور شہبازشریف کو کھانے پر بلایا، پھر کہنے لگے۔ ۔۔“چوہدری نثار کی پرانی ویڈیو وائرل، تہلکہ خیز انکشاف منظرعام پر

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)سابق وزیرداخلہ چوہدری نثاراحمد نے انکشاف کیا ہے کہ جنرل پرویز مشرف نے انہیں اور شہباز شریف کو کہا تھا کہ اگر (اس وقت کے) وزیراعظم(نوازشریف) اجازت دیں تو الطاف حسین کو برطانیہ میں ختم کیاجاسکتا ہے۔

چوہدری نثار نے اس ویڈیو میں بتایا کہ ایک دن پرویزمشرف نے مجھے اور شہبازشریف کو کھانے پر بلایا۔کھانے کے بعد انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس جو حقائق آئے ہیں ایجنسیوں کی طرف سے اس کے حوالے سے تو ایم کیو ایم ایک بہت بڑی مافیا ہے اور الطاف حسین اس کے سرغنہ ہیں،یہ ہمارے ملک کے مفاد میں نہیں ہے کہ آپ ان کو اس طرح چھٹی دیں،وہ اب برطانیہ میں بیٹھے ہوئے ہیں اور کوئی کسر نہیں اٹھا رکھ رہے پاکستان کو نقصان پہنچانے کی، اس لئے اگر وزیراعظم اجازت دیں تو ہم الطاف حسین کو برطانیہ میں ہی ختم کرسکتے ہیں۔

چوہدری نثاراحمدنے کہا کہ جنرل صاحب آپ کو احساس ہے کہ وہ ایک اور ملک میں ہیں اور اول تو ان کا خاتمہ کرنامناسب نہیں ہے لیکن اگردومنٹ کیلئے آپ کی یہ بات مانی جائے تو اس کا شدید عالمی ردعمل ہوگا،جنرل صاحب نے کہا وہاں ہمارے پاس ذرائع ہیں اور ہم تک یہ بات نہیں آئے گی۔

واضح رہے کہ سینئر صحافی اور ریڈیو پاکستان کے سابق ڈائریکٹر جنرل مرتضی سولنگی نے چوہدری نثار کی یہ ویڈیو پوسٹ کی ہے۔پوسٹ پر ردعمل دیتے ہوئے شاہیر نامی صارف نے لکھا ہے کہ” اس بات کی حقیقت سے قطعی انکار نہیں لیکن چودھری نثار صاحب ایک اہم پوزیشن پر رہے ہیں جہاں ملکوں کے مفاد میں اس سے کہیں بڑی باتیں ڈسکس کی جاتی ہیں۔

ان کے مطابق ’اس طرح پوائنٹ اسکورنگ نہیں کی جاتی۔کل آپ اپنے کسی مفاد کے لئے ایٹمی پروگرام یا کسی ہائی سیکیورٹی میٹر کو ڈسکس کریں گے‘

مزید : قومی


loading...