احسان مانی کے بیان نے بھارتی بورڈ کو ’آگ‘ لگا دی

احسان مانی کے بیان نے بھارتی بورڈ کو ’آگ‘ لگا دی
احسان مانی کے بیان نے بھارتی بورڈ کو ’آگ‘ لگا دی

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیئرمین احسان مانی کی جانب سے بھارت کو سیکیورٹی رسک قرار دئیے دئیے جانے کے بیان بھارتی بورڈ کے عہدیداروں کو آگ بگولہ کر دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی کرکٹ بورڈ کے نائب صدر ماہیم ورما نے چیئرمین پی سی بی کے گزشتہ روز دیئے گئے بیان کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ پی سی بی کو پہلے اپنے ملک کی سیکیورٹی کی فکر کرنی چاہیے اور پہلے اس کے بارے میں سوچنا چاہیے، ہم اپنے ملک اور اس کی سیکیورٹی کو سنبھالنے کے اہل ہیں اور کسی کو اس کے بارے میں فکر نہیں کرنی چاہیے۔

بھارتی کرکٹ بورڈ کے ایک اور عہدیدار ارون دھمل نے بھی احسان مانی کے بیان کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ ایک ایسا شخص جس کا زیادہ تر وقت لندن میں گزرتا ہے وہ بھارت کی سیکیورٹی پر کیسے بات کر سکتا ہے۔ ہندوستان ٹائمز سے گفتگو کرتے ہوئے ارون دھمل کا کہنا تھا کہ احسان مانی تو پاکستان کی سیکیورٹی صورتحال پر بھی تبصرہ کرنے کے اہل نہیں کیونکہ وہ تو زیادہ تر وہاں رہتے ہی نہیں ہیں، اگر وہ پاکستان میں زیادہ وقت گزاریں تو انہیں اصل صورتحال کا اندازہ ہوگا۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز پاکستان اور سری لنکا کے درمیان ٹیسٹ سیریز کے اختتام پر پاکستان نے کامیابی کا جشن منایا تھا اور ایک دہائی بعد ٹیسٹ کرکٹ کی بحالی پر چیئرمین پی سی بی احسان مانی کا کہنا تھا کہ پاکستان میں کرکٹ کی بحالی کے پیچھے انتھک محنت اور وابستگی کا عمل دخل ہے، ہم نے ثابت کیا ہے کہ پاکستان ایک محفوظ ملک ہے اگر کوئی کرکٹ کھیلنے کے لیے پاکستان نہیں آنا چاہتا تو اسے ثابت کرنا پڑے گا کہ پاکستان محفوظ نہیں ہے۔

احسان مانی کا کہنا تھا کہ سری لنکا کے ساتھ ٹیسٹ سیریز کے کامیاب انعقاد نے ثابت کیا ہے کہ پاکستان میں سیکیورٹی انتظامات پر کسی کو کوئی شک نہیں ہونا چاہیے، پاکستان اور سری لنکا کے درمیان ٹیسٹ سیریز کا انعقاد پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ کی بحالی کے حوالے سے ایک اہم سنگِ میل ہے، آج پاکستان کے مقابلے میں بھارت ایک بڑا سیکیورٹی رسک ہے۔

مزید : کھیل