بھارت جنگ چاہتا ہے تو ہم بھی منہ توڑ جواب دینے کیلئے تیار ہیں: چوہدری محمدسرور

بھارت جنگ چاہتا ہے تو ہم بھی منہ توڑ جواب دینے کیلئے تیار ہیں: چوہدری محمدسرور
بھارت جنگ چاہتا ہے تو ہم بھی منہ توڑ جواب دینے کیلئے تیار ہیں: چوہدری محمدسرور

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا ہے کہ جنگ سے کبھی مسائل حل نہیں ہوتے لیکن بھارت جنگ چاہتا ہے تو ہم بھی منہ توڑ جواب دینے کیلئے تیار ہیں، بھارتی افواج کی لائن آف کنٹرول پر بلا اشتعال فائرنگ مودی سرکار کے دہشتگردانہ ذہن کی عکاسی ہے،عملی زندگی میں صبر، تحمل اور عاجزی سے کام لینا چاہیے، پنجاب کی تمام یونیورسٹیز میں میرٹ اورشفافیات کو یقینی بنارہےہیں۔

 ایکسپو سنٹر لاہور میں یونیورسٹی آف سنٹر ل پنجاب کے کانووکیشن سے خطاب اور میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئےگور نر پنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا کہ پاکستان تمام ہمسائیہ ممالک کیساتھ دوستانہ تعلقات کا حامی ہے،خطے میں امن پاکستان کی اولین تر جیح ہے مگر بدقسمتی سے نریندر مودی کی سوچ اسکے بر عکس ہے، وہ مسلسل کشیدگی کو ہوا دے رہا ہے جسکی وجہ سے خطے میں امن کو بھی خطرات لاحق ہو چکے ہیں، کشمیر پر مظالم اور کر فیو کے بعد مسلمانوں کے خلاف بھارت میں نیا متنازعہ قانون بھی انتشار کی ایک اور بھارتی سازش ہے جسکے خطر ناک نتائج نکلیں گے۔اُنہوں نےکہا کہ آج صرف کشمیر کے اندر ہی نہیں بھارت میں بھی عوام نریندر مودی کے خلاف سڑکوں پر آچکے ہیں اور انکی پالیسوں کو مستر دکررہے ہیں،ایک سال کے دران 5بھارتی ریاستوں میں نر یندر مودی کی شکست بھارتی عوام کا نر یندر مودی کے خلاف اظہارنفر ت ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ پوری قوم سر حدوں پر دشمن کو منہ توڑ جواب دینے والی افواج پاکستان کیساتھ کھڑی ہے،جب بھی بھارت کوئی جار حیت کر یگا اس کو منہ توڑ جواب ہی ملے گا، ہر پاکستانی ملکی سلامتی اور خودمختاری کے تحفظ کیلئے ہر قر بانی دینے کو تیار ہے۔ کانووکیشن سے خطاب کے دوران گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا کہ میں 22کانووکیشن پر تمام گریجوایٹس کو بھر پور مبارکباد یتاہوں،مجھے اس بات کی بھی خوشی ہے کہ تعلیم کے شعبے میں قوم کی بیٹیاں ریکارڈ کامیابیاں حاصل کر رہی ہیں مگرآپ کا اصل امتحان آج کےدن سےشروع ہوگا،عملی زندگی میں گریڈزاورسی جی پی اے نہیں ہوتے،عملی زندگی میں صبر، تحمل اور عاجزی سے کام لینا چاہیے،زندگی امکانات سےبھرپورہے،آپ کواچھے اہداف کا انتخاب کرناہے،ہم پنجاب کی تمام یونیورسٹیز میں میرٹ اورشفافیات کو یقینی بنارہےہیں،سفارش کے کلچر اور سیاسی مداخلت کو مکمل طور پر ختم کر دیا ہے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور