”حیاوالاآدمی تو اپنے ملازم پر بھی الزام نہیں لگاتا“ رانا ثناءاللہ کی ضمانت پر حسن نثار کیس بنانیوالوں پربرس پڑے

”حیاوالاآدمی تو اپنے ملازم پر بھی الزام نہیں لگاتا“ رانا ثناءاللہ کی ضمانت ...
”حیاوالاآدمی تو اپنے ملازم پر بھی الزام نہیں لگاتا“ رانا ثناءاللہ کی ضمانت پر حسن نثار کیس بنانیوالوں پربرس پڑے

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)تجزیہ کار حسن نثار نے کہاہے کہ اس ملک کانظام کیاہے ،حیاوالا آدمی تو ملازم پر الزام نہیں لگاتا جب تک کوئی سرا ہاتھ نہ آئے ، رانا ثناءاللہ کیخلاف مجھے پہلے دن سے ہی یہ معاملہ بہت احمقانہ لگا تھا ۔

جیونیوز کے پروگرام ”رپورٹ کارڈ“میں گفتگو کرتے ہوئے حسن نثار نے کہا کہ رانا ثناءاللہ کیخلاف مجھے پہلے دن سے ہی معاملہ بہت احمقانہ لگا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ قتل کا ممکن ہے کہ پتہ نہ لگے لیکن منشیات کا کاروبار ایک ایسا کاروبار ہے کہ چند دنوں کے اندر اندر اس کی بدبوپھیل جاتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اب کیا کرناچاہئے مجھ سے پوچھو گے توبہت الٹاجواب دوں گا ،اس لئے رہنے دو مجھے تواس کیس پر بات کرتے ہوئے شرم آرہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اس کیس میں ایک خاندان کو اورایک ایسے بندے کو ٹارچر کیا ہے جس کے لاکھوں ووٹر ہیں اوراس سے محبت کرتے ہیں۔

حسن نثار کاکہنا تھا کہ یہ ایک جرم تھوڑی ہے ،اس جرم میں تو بے شمار جرائم ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس ملک کا کیانظام ہے ،حیاوالاآدمی توگھر کے ملازم پر الزام نہیں لگاتا جب تک کوئی سرا ہاتھ نہ آئے ۔انہوں نے کہا کہ نہ ان کو رب یاد ہے اور نہ رسول اللہ ﷺ کی تعلیمات یاد ہیں جس کا جی چاہتاہے منہ اٹھا کرجس پر مرضی ہاتھ ڈال دیتا ہے ، کچھ شرم کرنی چاہئے ، کم از کم کچھ نہ کچھ تیاری ہی کرلینی چاہئے ۔ راناثنا ءاللہ پر کیس بنانے کے ذمہ داروں کوسزاملنی چاہئے ۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد


loading...