ٹی ایچ کیو ہسپتال میلسی،سہولیات صفر،غریب مریض دربدر

ٹی ایچ کیو ہسپتال میلسی،سہولیات صفر،غریب مریض دربدر

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


میلسی(سٹی رپورٹر)  تحصیل ہیڈکوارٹر میلسی میں افسران کی عدم دلچسپی اور غفلت کی وجہ سے ٹی ایچ کیو لیبارٹری میں سی بی سی اینالائزر 25 نومبر سے خراب ہوچکا ہے مرمت کے لیے انجینئرز کے وزٹ کے باوجود آج تک ٹھیک نہ ہو کرایا گیا  اس سلسلے میں دو مرتبہ پیتھالوجسٹ کے ریمائینڈر لیٹر کے باوجود ایم ایس نے کوئی نوٹس نہیں لیا اسی طرح ایمر جنسی وارڈ میں پہلی (بقیہ نمبر5صفحہ6پر)
شفٹ کے دوران میل ڈاکٹر ڈیوٹی پر موجود نہیں ہوتا اور ایمرجنسی وارڈ میں آنے والے مریضوں کو فوری طبی سہولت  نہ ملنے پر شدید تکلیف کی حالت میں ہی وکٹوریہ ہسپتال بہاولپور ریفر کر دیا جاتا ہے جبکہ شعبہ ریڈیالوجی میں توشیبا کمپنی کا 1976 ماڈل کا پرانا ایکسرے لگا ہوا ہے جو 26 اکتوبر سے خراب پڑا ہے۔ اسی طرح سیمن ایکسرے موبائل یونٹ 2017 کو ٹی ایچ کیو میں نصب ہوا لیکن عدم توجہی کی وجہ سے 19دسمبر 2022 کو استعمال کے قابل ہوسکا ٹی ایچ کیو میلسی میں سہولیات کے فقدان اور ذمہ دار افسران کی غفلت کی وجہ سے مریض دوسرے شہروں میں در بدر دھکے کھانے پر مجبور ہیں شہریوں اور سماجی حلقوں نے سیکرٹری ہیلتھ ساوتھ پنجاب اوردیگر اعلی حکام سے درخواست کی ہے کہ ٹی ایچ کیو میلسی شعبہ ریڈیالوجی میں وہاڑی اور بورے والا کی طرح ڈیجیٹل ایکسرے یونٹ فراہم کر کے آپ گریڈ کیا جائے اورہسپتال کے انتظامی امور کو بہتر بنایا جاے۔