ڈاکٹر زکی عدم موجود گی کے باعث مریض کی ہلاکت، انکوائر ی کمیٹی تبدیل

     ڈاکٹر زکی عدم موجود گی کے باعث مریض کی ہلاکت، انکوائر ی کمیٹی تبدیل

  

فیصل آباد(نامہ نگار خصوصی) ڈی ایچ کیو ہسپتال فیصل آباد کے سکن وارڈ میں داخل ناصر نامی ایک مریض متعلقہ ڈاکٹرز اور اسٹاف کی مبینہ عدم موجودگی کے باعث بروقت طبی امداد نہ ملنے پر جان کی بازی ہار گیا‘کسی بھی ممکنہ یا خوشگوار صورتحال سے بچنے کیلئے مریض کا ڈیتھ سرٹیفکیٹ بھی متعلقہ ڈاکٹرز کی بجائے ڈی ایم ایس نائٹ کو جاری کرنا پڑا،بعض غیر معمولی حالت کی وجہ سے ایم ایس سول ہسپتال کو 24گھنٹے کے اندر اندر ہی انکوائری کمیٹی تبدیل کرنا پڑی،معلوم ہوا ہے کہ نئی انکوائری کمیٹی میں اسی وارڈ کے رجسٹرار کو بھی ممبر نامزد کیا گیا ہے اس افسوسناک واقعہ کا پس منظر یہ بتایا گیا کہ21فروری کی رات تقریبا ڈیڑھ دو بجے سکین وارڈ میں داخل مریض ناصر کی بیماری نے شد ت پکڑی تو اٹینڈنٹ نے وارڈ میں ڈاکٹرز اور نرسنگ سٹاف کو تلاش کیا تو پتہ چلا کہ ڈیوٹی ڈاکٹر تقریباً4گھنٹے سے وارڈ میں موجود نہ ہیں جبکہ متعلقہ سٹاف نرس بھی غیر حاضر ہے،اسی تلاش کے دوران ہی مریض کی موت واقع ہوگئی،  ڈی ایم ایس نائٹ خود ہی ڈیتھ سرٹیفکیٹ جاری کردیا‘اطلاع ملنے پر ایم ایس نے فوری طور پر ڈاکٹر امتیاز ڈوگر،ڈاکٹر عارف مان اور ایڈیشنل ایم ایس پر مشتمل ایک انکوائری کمیٹی تشکیل دے کر انکوائری کرنے کا حکم دیاوہ انکوائری اس لیے شروع نہ ہوسکی کہ ایک ممبر عارف مان کی بیماری کی وجہ سے اور دوسرے ڈاکٹر امتیاز ڈوگر اپنی امتحانی ڈیوٹی کے باعث مصروف تھے اس لیے ایم ایس نے اگلے روز ہی میڈیکل یونٹ 5کے پروفیسر ڈاکٹر مسعود،رجسٹرارسکن وارڈ ڈاکٹر عابد اور ایڈیشنل ایم ایس پر مشتمل نئی انکوائری کمیٹی تشکیل دے دی‘اس کمیٹی میں شامل ایک ممبر کو تو براہ راست انتظامی ذمہ دار بھی خیا ل کیا جاتا ہے

مریض ہلاکت

مزید :

صفحہ آخر -