ڈسکہ الیکشن میں ڈاکہ ڈالا گیا، حکمرانوں سے پارلیمانی ممبران سمیت ہر ہوئی تنگ: مسلم لیگ (ن)

    ڈسکہ الیکشن میں ڈاکہ ڈالا گیا، حکمرانوں سے پارلیمانی ممبران سمیت ہر ہوئی ...

  

 اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) مسلم لیگ (ن) کے رہنما سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ حکومت خود الیکشن چوری کرنے میں ملوث ہے ڈسکہ میں ری پولنگ کی بات نہیں حکومت دھونس جما رہی ہے حکمرانوں سے پارلیمان ممبران سمیت ہر کوئی تنگ ہے الیکشن کمیشن کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہو  ئے شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ این اے75 ڈسکہ ضمنی الیکشن میں ڈاکہ  ڈالا گیا  الیکشن کمیشن خود کہہ رہا ہے حلقے میں دھاندلی ہوئی حکومتی سازش بے نقاب ہوئی  اب یہ لوگ منہ چھپاتے پھر رہے ہیں  الیکشن کمیشن میں سماعت کیمروں کے سامنے ہونی چاہیے جو ڈسکہ میں ہوا اس کے بعد ابھی تک نہ چیف سیکرٹری مل رہے ہیں نہ آئی جی اور ڈی آئی مل رہا ہے الیکشن کمیشن کے پریذائیڈنگ آفیسر غائب ہو رہے ہیں  شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ آج پارلیمان مفلوج ہوچکی ہے، اسلام آباد میں ایک ماہ سے زائد سے وکلا نے عدالتوں کا بائیکاٹ کیا ہے، آج سابق وزیراعظم اور وزیراعلی کٹہرے میں کھڑے ہیں یہاں عدل کا نظام بھی مذاق بن چکا ہے، احتساب کا ادارہ کرپشن میں ملوث ہے، مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما  خواجہ سعد رفیق نے کہا ہے کہ تحریک انصاف نے کوئی ضمنی الیکشن نہیں جیتا، حکومت کا ایک ہی کام ہے مخالفین کو ٹارگٹ کرنا ہے  میڈیا سے گفتگو کرتے ہو ئے  مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما سعد رفیق نے کہا کہ این اے 75 میں دھاندلی نہیں بلکہ دھاندلا کیاگیاہے تحریک انصاف نے کوئی ضمنی الیکشن نہیں جیتا جبکہ یہ حکومت عادی ووٹ چور ہے مسلم لیگ (ن) کے رہنما احسن اقبال نے کہا  ہے کہ ووٹ چرانا قتل سے بڑا جرم اور آئین سے غداری ہے، امید ہے الیکشن کمیشن ڈسکہ الیکشن کو ٹیسٹ کیس بناتے ہوئے ملوث اہلکاروں کو نشان عبرت بنائے گا، شفافیت کے لئے پورے حلقے کا دوبارہ انتخاب کرایا جائے۔ لیگی رہنماؤ ں کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے  انہوں نے کہا کہ سندھ، خیبرپختونخوا اور بلوچستان میں الیکشن نارمل ہوتا ہے، ڈسکہ میں جس بھونڈے طریقے سے الیکشن چرانے کی کوشش کی گئی، اس طرح یوگنڈا اور افریقہ میں آمر بھی نہیں کرتے۔

شاہد خاقان عباسی

مزید :

صفحہ اول -