پی ڈی ایم اسٹیبلشمنٹ کی مداخلت کا خاتمہ چاہتی ہے،غفور حیدری 

  پی ڈی ایم اسٹیبلشمنٹ کی مداخلت کا خاتمہ چاہتی ہے،غفور حیدری 

  

جیکب آباد،کوئٹہ(این این آئی) جمعیت علماء اسلام کے مرکزی سیکریٹری جنرل مولانا عبدالغفور حیدری نے کہا ہے کہ پی ڈی ایم کی تحریک کا مقصد سیاست سے اسٹیبلشمنٹ کی مداخلت کا خاتمہ ہے، سینٹ انتخابات میں بھی ”دھند“ کا خدشہ ہے، 2018ء کے انتخابات میں جن قوتوں نے مداخلت کی اب بھی وہ مداخلت کی کوشش کررہی ہیں، سینٹ الیکشن میں ہمارا کوئی نہیں بکے گا حکومتی صفوں میں ضمیر فروش، کرپٹ اور خانہ بدوش لوگ موجود ہیں اس لیے انہیں خطرہ ہے کہ ان کے ووٹ بکیں گے۔ گزشتہ روزیہاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے عبدالغفور حیدری نے کہا کہ ضمنی الیکشن میں اپوزیشن جماعتوں نے مشترکہ امیدوار کھڑے کئے اور ہم نے پورے ملک میں کامیابیاں حاصل کیں، کرم ایجنسی اور ڈسکہ میں ہمارے امیدوار کامیاب ہوئے لیکن تنائج کو تبدیل کیا گیا۔ اسٹیبلشمنٹ کی اگر مداخلت نہیں ہوگی تو ہم جتیں گے جس کا ثبوت ضمنی انتخابات میں سب کے سامنے ہے جبکہ 2018ء کے انتخابات میں تاریخ کی بدترین دھاندلی کی گئی اور نااہل لوگ کو حکومت دی گئی جس کا خمیازہ پوری قوم بھگت رہی ہے اگر اسٹیبلشمنٹ سیاست میں مداخلت نہ کرے تو جے یو آئی پنجاب، سندھ سمیت پورے ملک میں کامیابی حاصل کرے گی۔ آج پوری دنیا میں ماحول تبدیل ہورہا ہے برما میں فوج نے مداخلت کی تو لوگ باہر نکل آئے ترکی میں فوج آئی تو عوام ٹینکوں کے سانے لیٹ گئے ہماری تحریک کا مقصد بھی یہی ہے کہ ملک میں حقیقی جمہوریت بحال ہو اور ادارے اپنے آئینی دائرے میں رہ کر کام کریں جس سے ملک میں ترقی کرے گا اور ملک میں خوشحالی آئے گی۔

غفور حیدری 

مزید :

صفحہ آخر -