انشورنس کے لیے حاملہ بیوی کو پہاڑی سے دھکا دینے والا شخص، خاتون کے آخری لمحات کی ویڈیو سامنے آگئی

انشورنس کے لیے حاملہ بیوی کو پہاڑی سے دھکا دینے والا شخص، خاتون کے آخری لمحات ...
انشورنس کے لیے حاملہ بیوی کو پہاڑی سے دھکا دینے والا شخص، خاتون کے آخری لمحات کی ویڈیو سامنے آگئی
سورس:   Twitter/TusharKant_Naik

  

انقرہ(مانیٹرنگ ڈیسک) ترکی میں انشورنس کی رقم کے لالچ میں شوہر نے اپنی حاملہ بیوی کو پہاڑ سے دھکا دے کر موت کے گھاٹ اتار ڈالا، خاتون کے آخری لمحات کی ویڈیو بھی سامنے آ گئی۔میل آن لائن کے مطابق 40سالہ ہیکن ایسل نامی اس لالچی آدمی نے اپنی 31سالہ بیوی سیمرا کو ترکی کے شہر موگلا میں سمندر کنارے واقع ایک سینکڑوں فٹ بلند چٹان سے دھکا دیا۔ وہ موگلا میں چھٹیاں منانے گئے تھے۔ہیکن نے سیمرا کو دھکا دینے سے پہلے اس کے ساتھ آخری تصویر بنائی اور فون اسے پکڑانے کے بہانے اسے دھکا دے دیا۔

رپورٹ کے مطابق ہیکن نے یہ واردات جون 2018ءمیں کی تھی جس کی تحقیقات تاحال جاری ہیں۔ پراسیکیوٹرز نے عدالت میں بتایا کہ ہیکن کی بیوی چند ہفتوں بعد بچے کو جنم دینے والی تھی۔ا س نے اپنی بیوی کے ساتھ بچے کو بھی قتل کیا۔ اس نے چند ماہ پہلے ہی سیمرا کی لائف انشورنس کروائی تھی۔ اس کی موت کے فوری بعد وہ انشورنس کی 4لاکھ لیرا(تقریباً89لاکھ روپے) کی رقم کلیم کرنے چلا گیا لیکن کمپنی نے جب سیمرا کی موت کی تفتیش جاری ہونے کی خبر سنی تو انہوں نے انشورنس کی رقم روک دی۔

 ہیکن نے اپنے اوپر عائد اس الزام کی تردید کی ہے اور کہا ہے کہ سیمرا کو اس نے دھکا نہیں دیا بلکہ وہ خود پھسل کر گری۔ تاہم ایک ویڈیو منظرعام پر آئی ہے جس میں ہیکن سیمرا کو بہانے سے اس خطرناک چٹان کی طرف لیجا رہا ہوتا ہے۔یہ ویڈیو کسی دوسرے سیاح نے بنائی تھی جو اب سامنے آئی ہے، اس ویڈیو میں مقتولہ کے آخری لمحات کو دیکھا جا سکتا ہے۔ پراسیکیوٹرز نے عدالت میں بتایا ہے کہ ہیکن سیمرا کو لے کر تین گھنٹے تک اس چٹان پر بیٹھا رہا۔ اس کے اتنا وقت وہاں بیٹھنے کا مقصد اپنی اسی منصوبہ بندی پر عمل کرنا تھا۔ وہ دوسرے لوگوں کے وہاں سے جانے کا انتظار کرتا رہا تھا۔ملزم کے خلاف عدالت میں مقدمے کی کارروائی جاری ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -