مقامی و غیر ملکی افراد کو سائبیرین پرندوں کا شکار کرنے سے روکدیاگیا

مقامی و غیر ملکی افراد کو سائبیرین پرندوں کا شکار کرنے سے روکدیاگیا

لاہور (نامہ نگار خصوصی ) لاہور ہائیکورٹ نے پاکستانی شہریوں کے ساتھ ساتھ عرب شہزادوں کو بھی سائبیریا سے آنے والے مہمان پرندوں کا شکارکرنے سے تاحکم ثانی روک دیاہے۔عدالت نے وفاقی حکومت،حکومت پنجاب اور دیگر فریقین کے وکلاءکو آئندہ سماعت پر مزید بحث کے لئے طلب کر لیا۔ گزشتہ روز کیس کی سماعت کے دوران درخواست گزار سلمان کاشف نے عدالت کو بتایا کہ عالمی قوانین کے تحت نایاب پرندوں کا شکار نہیں کیا جا سکتا اور نہ ہی انکی خرید و فروخت کی جا سکتی ہے جبکہ یہ پرندے عام مارکیٹ میں لاکھوں روپے کے حساب سے فروخت بھی کئے جا رہے ہیں ۔ عدالت نے سائبیریا سے آئے مہمان پرندوں کے شکار کے خلاف عبوری حکم امتناعی جاری کرتے ہوئے وفاقی حکومت،پنجاب حکومت اور دیگر فریقین کے وکلاءکو 10فرو ری کو مزید بحث کے لئے طلب کر لیا۔

شکار پابندی

مزید : صفحہ آخر