ٹیچنگ ہسپتال میں ناکافی ڈاکٹروں سے مریضوں کو مشکلات کاسامنا ہے، مہرین راجہ

ٹیچنگ ہسپتال میں ناکافی ڈاکٹروں سے مریضوں کو مشکلات کاسامنا ہے، مہرین راجہ

لاہور(لیڈی رپورٹر) سابق وزیر مملکت انصاف و پارلیمانی امور مہرین انور راجہ نے کہا ہے ہسپتال میں ٹیچنگ کیڈر کے علاوہ351ڈاکٹرز کی سٹیٹیں منظور کی گئیں ان میں سے179سیٹوں پر ڈاکٹرز ہی موجود نہیں ہیں جبکہ ڈی ایم ایس کی4سیٹیں بھی خالی ہیں، ڈاکٹروں کی اتنی بڑی تعداد آسامیاں خالی ہونے کی وجہ سے اس ٹیچنگ ہسپتال میں آنے والے مریضوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے جبکہ ڈیوٹی انجام دینے والے ڈاکٹر بھی اضافی بوجھ تلے کام کرنے پر مجبور ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ سروسز ہسپتال میں گریڈ19میں ایڈیشنل میڈیکل سپرنٹنڈنٹ کی5سیٹیں ہیں لیکن یہ بھی خالی پڑی ہیں اسی طرح گریڈ18کی ڈپٹی میڈیکل سپرینٹینڈنٹ کی 3آسامیوں پر کوئی تعیناتی نہ ہوسکی جبکہ میڈیکل سپیشلسٹ اور سرجیکل سپیشلسٹ کی ایک ایک اور ریڈیالوجسٹ کی 3سیٹوں کے علاوہ مختلف کیڈر میں ڈاکٹرز کی آسامیاں خالی ہیں جس کے باعث ہسپتال میں رجوع کرنے والے مریضوں کو اپنے علاج معالجہ کیلئے پریشانی کا سامنا ہے ۔

انہوں نے کہا عوام کو بتایا جائے کہ محکمہ سپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر اینڈ میڈیکل ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ کی طرف سے سروسز ہسپتال سمیت پنجاب کے ہسپتالوں میں خالی ڈاکٹروں کی آسامیاں کب تک پرْ کی جائیں گی اور ان کی راہ میں کیا رکاوٹیں حائل ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 4