نئے ٹیکس گزاروں کوکوریئر سروس کے ذریعے نوٹسز بھجوانے کی پالیسی ناکام

نئے ٹیکس گزاروں کوکوریئر سروس کے ذریعے نوٹسز بھجوانے کی پالیسی ناکام

ملتان(نیوز رپورٹر) فیڈرل بورڈ آف ریونیو کی جانب سے نئے ٹیکس گزاروں کو کوریئر سروس کے ذریعے ٹیکس نوٹسز بھجوانے کی پالیسی بوگس و ناقص ایڈریس کے باعث مکمل طور پر ناکارہ ہو کر رہ گئی ہے فیلڈ فارمیشن آفیسرز کے دفاتر تک محدود کردینے کی وجہ سے نئے ٹیکس گزاروں کے بارے میں مکمل (بقیہ نمبر43صفحہ12پر )

معلومات نہ ہونے سے ٹیکس نیٹ کا دائرہ کار محدود ہوا ہے بلکہ کوریئر سروس بھی لاکھوں روپے کا ضیاع کیا جا رہا ہے ریجنل ٹیکس آفس ملتان کی جانب سے گذشتہ تین ماہ کے دوران مختلف پرائیویٹ پرائیویٹ اداروں کو ہزاروں کی تعداد میں نوٹسز جاری کیے گئے ہیں تاہم ان کو بالجبر ٹیکس نیٹ میں لانے کیلئے لاکھوں روپے کے ٹیکس نوٹسز بھجوا دیئے گئے ہیں اس صورتحال میں کمشنر اپیلز آصف رسول کے پاس ٹیکس اپیلوں کی بھرمار ہوگئی ہے جبکہ کمشنر اپیلز آصف رسول کے پاس ملتان ریجن سمیت بہولپور کے آر ٹی او میں کمشنر اپیلز کا بھی اضافی چارج ہے جس کی وجہ سے ٹیکس گزاروں کے معاملات مہینوں لٹکے رہتے ہیں جس کی وجہ سے ٹیکس گزاروں کو شدید ذہنی اذیت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ملتان ٹیکس بار کی جانب سے بھی کمشنر اپیلز آصف رسول کے بہاولپور کے اضافی چارج پر شدید احتجاج کیا ہے ان کیمطابق ہفتہ میں صرف تین دن ٹیکس گزاروں کے اپیلیں نمٹانے کے باعث ہزاروں کیس لٹک کر رہ گئے ہیں چیف کمشنر آر ٹی او ملتان زبیر بلال کو اس صورتحال سے نمٹنے کیلئے فوری اقدامات اٹھانے چاہئیں۔

مزید : ملتان صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...