پاکستان ایڈمنسٹریٹو اور سول سروسز کے امتحانات میں کمزوریاں ہیں،تہمینہ جنجوعہ

پاکستان ایڈمنسٹریٹو اور سول سروسز کے امتحانات میں کمزوریاں ہیں،تہمینہ ...

اسلام آباد( آئی این پی ) سینیٹ خصوصی کمیٹی میں سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نے بتایا کہ پاکستان ایڈمنسٹریٹو سروس اور سول سروس کے امتحانات میں کمزوریاں ہیں ۔ فارن سروس کے مقابلے امتحانات میں کامیاب ہونے کیلئے خصوصی مہارت اور علم کی پابندی نہیں انہوں نے تجویز کیا کہ بین الاقوامی تجارت ، بین الاقوامی تنظیموں اور بین الاقوامی زبانوں پر زیادہ توجہ کی ضرورت ہے ۔ فارن سروس میں بھرتی ہونے والے امیدواران کیلئے یونیورسٹیوں کے شعبہ بین الاقوامی تعلقات عامہ میں لیکچرز کا بندوبست کیا جاتا ہے فارن سروس میں اعلیٰ درجے کے تجربہ کار آفسیر موجود ہیں لیکن تعداد کی کمی کا سامنا ہے ۔تفصیلات کے مطابق سینیٹ خصوصی کمیٹی کے کنونیئر سینیٹر سید مظفر حسین شاہ نے اسٹبلشمنٹ ڈویژن ، ایف پی ایس ای ،ایچ ای سی اور متعلقہ اداروں کو فیڈرل پبلک سروس کمیشن کے امتحانات کے طریقہ کار ، بھرتیوں ، رولز میں ترامیم کے بارے میں ہدایت دی ہے کہ اپنی اپنی تحریری تجاویز تین دن کے اندر اندر کمیٹی کو جمع کروائیں ،جمعہ کو منعقد ہونے والی کمیٹی میں اداروں اور ممبران کمیٹی کی دی گئی تحریری تجاویز کی روشنی میں سفارشات مرتب کی جائیں گی ۔ اجلاس میں سیکرٹری خارجہ نے بتایا کہ پاکستان ایڈمنسٹریٹو سروس اور سول سروس کے امتحانات میں کمزوریاں ہیں ۔ فارن سروس کے مقابلے امتحانات میں کامیاب ہونے کیلئے خصوصی مہارت اور علم کی پابندی نہیں انہوں نے تجویز کیا کہ بین الاقوامی تجارت ، بین الاقوامی تنظیموں اور بین الاقوامی زبانوں پر زیادہ توجہ کی ضرورت ہے ۔ فارن سروس میں بھرتی ہونے والے امیدواران کیلئے یونیورسٹیوں کے شعبہ بین الاقوامی تعلقات عامہ میں لیکچرز کا بندوبست کیا جاتا ہے فارن سروس میں اعلیٰ درجے کے تجربہ کار آفسیر موجود ہیں لیکن تعداد کی کمی کا سامنا ہے ۔ چیئرمین کمیٹی نے بیرون ملک 14 پاکستان چیئرز خالی رہ جانے پر تشویش کا اظہار کیا ۔ ایچ ای سی حکام نے کمیٹی کو تحریری تجاویز سے آگاہ کیا ۔ سیکرٹری اسٹبلشمنٹ نے کمیٹی کو آگاہ کیا کہ 15 دنوں کے اندر کمیٹی کی سفارشات پر مشتمل ڈرافٹ کو حتمی شکل دے کر کمیٹی میں پیش کر دیا جائے گا۔

تہمینہ جنجوعہ

مزید : علاقائی