2سے 11فروری تک عشرہ یکجہتی کشمیر منانے کا اعلان، بیرونی قوتوں کا اصل ٹارگٹ ایٹمی پروگرام اور سی پیک ہے: حافظ سعید

2سے 11فروری تک عشرہ یکجہتی کشمیر منانے کا اعلان، بیرونی قوتوں کا اصل ٹارگٹ ...

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)امیر جماعۃ الدعوۃ پاکستان پروفیسر حافظ محمد سعید نے 2فروری سے 11 فروری تک عشرہ یکجہتی کشمیر منانے کا اعلان کیا اور کہا ہے کہ چاروں صوبوں و آزاد کشمیر میں بڑے جلسوں، کانفرنسوں اور ریلیوں کا انعقاد کیا جائے گا۔ سال 2017کشمیر کے نام کرنے پر مجھے نظربند کیا گیا‘ رہائی کے بعد 2018میں کشمیریوں کیلئے تحریک چلانے کا اعلان کیا توبھارتی خوشنودی کیلئے ایک مرتبہ پھر جماعۃالدعوۃ کیخلاف کاروائی کی خبریں آرہی ہیں۔ اسرائیلی وزیر اعظم کے دورہ بھارت کے بعد کنٹرول لائن پر فائرنگ اور کشمیر میں قتل و غارت گری بڑھ گئی۔ بیرونی قوتوں کا اصل ٹارگٹ پاکستان کا ایٹمی پروگرام اور سی پیک ہے۔بھارتی و امریکی دباؤ پر جماعۃالدعوۃ اور فلاح انسانیت فاؤنڈیشن کیخلاف کوئی کاروائی ہوئی تو عدالتوں میں بھرپور قانونی جنگ لڑیں گے۔ حکمران پاکستانی اعلیٰ عدلیہ کے فیصلے اقوام متحدہ اور دنیا کے سامنے کیوں نہیں رکھتے؟۔کشمیر پر بھی اقوام متحدہ کی قراردادیں موجود ہیں ان پر تو کبھی عملدرآمد نہیں ہوا۔ مرکز طیبہ مریدکے کا ایجوکیشنل کمپلیکس اور ملک بھر میں ہمارے مراکز کے دروازے سب کیلئے کھلے ہیں۔حکومتی اقدامات پر کسی ردعمل کا شکارہو کر دشمن کو فائدہ اٹھانے کا موقع نہیں دیں گے۔ وہ مرکز القادسیہ چوبرجی میں پریس کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔ اس موقع پر جماعۃالدعوۃ سیاسی امور کے سربراہ پروفیسر حافظ عبدالرحمن مکی، مولانا امیر حمزہ اور ابوالہاشم ربانی موجود تھے۔ جماعۃالدعوۃ کے سربراہ حافظ محمد سعید نے کہاکہ جماعۃ الدعوہ اورفلاح انسانیت فاؤنڈیشن کے اثاثے ضبط کرنے اورتحویل میں لئے جانے کی باتیں چل رہی ہیں۔جماعۃالدعوۃ اور ایف آئی ایف کیا کر رہی ہے کیا دنیا اس سے ناواقف ہے؟پہلے امریکہ ڈومور کہتا تھااور ہمارے حکمران یس سر کہتے ہوئے ان کی باتیں تسلیم کرتے تھے لیکن اب یہی پالیسی انڈیا کے حوالہ سے چل رہی ہے۔کشمیر پر اقوام متحدہ کی کتنی قراردادیں ہیں لیکن بھارت نے کبھی ان کی پرواہ نہیں کی،بھارت کی آٹھ لاکھ فوج کشمیریوں کی نسل کشی کر رہی ہے حکومت اس کیخلاف مضبوط آواز بلند کرے۔انہوں نے کہاکہ جب ہم نے 2017 کشمیر کے نام کیا تو پاکستان میں مجھے اور میرے ساتھیوں جبکہ مقبوضہ کشمیر میں سید علی گیلانی،یاسین ملک،آسیہ اندرابی،شبیر احمد شاہ ودیگرکو گرفتار کر لیا گیا۔انڈیا ہر ایسے موقع پرمتحر ک ہو جاتا ہے اورامریکہ انڈیا کے اشاروں پر ناچتا ہے۔بھارت و امریکہ نے اسلام آباد پردباؤ بڑھایا جس پر میں دس ماہ نظربند رہا۔جب میری رہائی ہوئی تو ہم نے سال 2018میں کشمیریوں کی تحریک کو نتیجہ خیز بنانے کے لئے کام کرنے کا اعلان کیا تو بھارت ایک مرتبہ پھر پروپیگنڈہ کر رہا ہے۔اسکی خارجہ پالیسی صرف حافظ سعید کے گرد گھوم رہی ہے۔میرا مسئلہ صرف کشمیر ہے۔ہم کشمیریوں کی مدد سے پیچھے نہیں ہٹ سکتے۔

مزید : صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...