جندول ،کرش پلانٹس بندش ،سڑکوں اور گلیوں میں کام نہیں ہوسکے

جندول ،کرش پلانٹس بندش ،سڑکوں اور گلیوں میں کام نہیں ہوسکے

جندول (نمائندہ پاکستان)جندول لویر دیر سوات دیر بالا سمیت ملاکنڈ ڈویژن میں کرش پلانٹس کے بندش اور میٹریل نہ ملنے سے ہزاروں مزدورکار لوگ بے روزگار ہوچکے ہیں کرش اور ریت ناملنے سے گھروں مارکیٹوں کے علاوہ سرکاری ٹھکداران نے پی سی سی روڈزاور کوچہ جات پر کام بند کیا ہواہے تفصیلات کے مطابق کے مطابق میٹریل ناہونے اور کاموں کے بندش سے سیمنٹ اور سریا کے ڈیلرز بھی متاثر ہوگیا ہیں کئی لوگ پشاور باڑہ سے کرش اور صوابی سے ریت منگواتا ہے جسکا قیمت بائیس سو سے چھے ہزار تک سیکڑہ پہنچ گیاہے کئی گاڑیاں ٹرک ٹریکٹر ،ڈائنہ مالکان نے اپنا گاڑیاں گھروں میں لاکر کھڑا کردیا ہے میڈیا سے تفصیلات بتاتے ہوئے تحصیل ناظم سید احمد باچہ اور نائب ناظم بشرالحق ڈسٹرکٹ ممبر ملک احمد شاہ مشوانی اور ڈسٹرکٹ ممبر رحیم شاد باچہ کا کہنا تھا کہ علاقے میں مٹرریل ناملنے سے لوگوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے انھوں نے صوبائی حکومت سمیت وفاقی حکومت سے مطالبہ کیا کہاکہ ملاکنڈ ڈویژن میں کرش پلانٹس بندش کے فیصلے پر نظرسانی کر کے مزدور لوگوں کے روزگار بحال کرے

مزید : پشاورصفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...