ہنگو، بچوں کو مہلک بیماریوں سے بچانے کیلئے حفاظتی ٹیکوں کیساتھ روٹا ویکسنیشن دینے کا فیصلہ

ہنگو، بچوں کو مہلک بیماریوں سے بچانے کیلئے حفاظتی ٹیکوں کیساتھ روٹا ...

ہنگو (بیورورپورٹ)محکمہ صحت ہنگو کی جانب سے بچوں کو مہلک بیماریوں سے بچاو کے لئے حفاظتی ٹیکو کے ساتھ روٹا ویکسینشن دینے کا فیصلہ۔ ضلع ناظم مفتی عبید اللہ اور ڈپٹی کمشنر ہنگو شاہد محمود نے بچے کوروٹا ویکسین کے قطرے پلا کر باقاعدہ افتتاح کر دیا۔تفصیلات کے مطابق تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال میں محکمہ صحت ہنگو کے زیر اہتمام روٹا ویکسنیشن کے آغاز پر افتتاحی تقریب کا انعقاد کیا گیا جس میں ضلع ناظم مفتی عبید اللہ ،ڈپٹی کمشنر شاہد محمود، اے ڈی سی عطاء المنعم، ڈی ایچ او ڈاکٹر ثمین، ایم ایس ہنگو ہسپتال،ڈی ایس وی حاجی عبد الرحمان سمیت علاقہ مشران اور بلدیاتی نمائیندوں نے شرکت کی۔ اس موقع پر ضلع ناظم مفتی عبید اللہ اور ڈپٹی کمشنر نے باقاعدہ افتتاح کر دیا ۔ اس موقع پر ڈی ایچ اوڈاکٹر ثمین نے روٹا ویکسینیشن کے حوالے سے بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ روتا ویکسین ایک سال کم بچوں کو حفاظتی ٹیکے کے ساتھ لگائیں جائیں گے جس سے بچے مہلک بیماریوں سے بچ سکتے ہیں ۔ جبکہ مہلک بیماریوں سے بچاوں کے لئے روٹا ویکسینیشن کو روٹین حفاظتی ٹیکوں کے ساتھ باقاعدہ طور پر 23تاریخ سے سرکاری ہسپتالوں میں شروع کیا جائے گاجبکہ روٹا ویکسنیشن ایک ما ہ کے وقفے پر دو دفعہ ویکسین دئیے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ مزکورہ ویکسینیشن دنیا کے 93ممالک میں استعمال کیا جاتا ہے جبکہ پاکستان دنیا کا 94واں ملک ہے جہاں روٹا ویکسینیشن کا استعمال کیا جائے گا۔ افتتاحی تقریب سے خطاب میں ضلع ناظم مفتی عبیداللہ اور ڈپٹی کمشنر شاہد محمود نے محکمہ صحت کے اس اقدام کو سراہتے ہوئے کہا کہ روٹا ویکسینیشن کے استعمال سے معصوم بچے بیماریوں سے محفوظ رہیں گے جبکہ ویکسین کی آگاہی میں علاقہ عوام کا تعاون نا گزیر ہے تا کہ کوئی بھی بچہ روٹاویکسین سے محروم نہ رہے۔ انہوں نے کہا کہ ضلعی حکومت اور ضلعی انتظامیہ محکمہ صحت کے ساتھ ہر قسم کے تعاون کرنے کے لئے تمام تر توانائیاں بروے کار لائیں گے۔

Back to Conversion Tool

مزید : پشاورصفحہ آخر