مظفرآباد،اکلاس ملازمین کا دھرنا جاری،دیگر تنظیمیں بھی کیمپ میں پہنچ گئیں

مظفرآباد،اکلاس ملازمین کا دھرنا جاری،دیگر تنظیمیں بھی کیمپ میں پہنچ گئیں

مظفرآباد(بیورورپورٹ)اکلاس ملازمین تا دم مرگ دھرنا آزاد جموں وکشمیر ملازمین تنظیمیں اکلاس ملازمین کی حمایت میں کودپڑیں ۔ ملازمین تنظیموں کے قائددین دھرنا کیمپ پہنچ گے۔ سواداعظم تنظیم غیر جریدہ، ایپکا آزادکشمیر سیکرٹریٹ ایمپلائز ملازمین سمیت درجنوں تنظیموں نے اکلاس کے تا دم مرگ دھرنا میں بیٹھے ملازمین سے بھرپور اظہار یکجہتی کیا۔ سوادااعظم تنظیم غیر جریدہ کے مرکزی صدر سالک رشید عباسی، سیکرٹری جنرل خواجہ عبدالوحید ، ایپکا آزادکشمیر کے مرکزی صدر سید صدیق شاہ، جنرل سیکرٹری سید سبطین نقوی، سیکرٹریٹ ایمپلائز ایسوسی ایشن کے صدر محمد شریف اعوان اور دیگر ملازمین تنظیموں کے صدور اور عہدیداران نے دھرنا ملازمین کو بھرپور حمایت کا یقین دلایا۔ 24 گھنٹوں سے جاری دھرنا شرکاء کے ضعیف العمر، شرکاء کی حالت غیر ہو گئی۔ کئی شرکاء کی آہیں سسکیاں اور آنسوؤں کی لڑیا ں جاری رہی۔ ملازمین تنظیموں کے قائدین اکلاس دھرنا کو جائز قرار دے دیا۔ ملازمین سپریم کونسل نے ریاست گہیر احتجاج کی دھمکی دے دی۔ بار بار نوٹیفکیشن جاری کرتے ہوئے ہیں مگر ان پر عمل نہیں کرتے یہ ڈرامہ بازی بندی کی جائے۔ 25سے زائد تنظیمیں اکلاس ملازمین پر پشت پر کھڑی ہوں گی۔ جی او سی مری چوبیس گھنٹوں کے اندر حکومتی نوٹیفکیشن پر عمل درآمد کرائیں۔ اب ملازمین مظفرآباد، اسلام آباد کی حکومتوں کی طرف نہیں جی او سی مری کی طرف لانگ مار چ کریں گے۔ آزاد جموں وکشمیر سپریم کورٹ سوموٹو ایکشن لے ان کے سامنے دھرنا کیمپ میں ملازمین بے بسی کی تصویر بنے ہوئے ہیں۔ دھرنا سے ملازمین تنظیموں کے قائدین کا خطاب ۔ سواد اعظم تنظیم غیر جریدہ آزاد جموں وکشمیر کے مرکزی صدر سالک رشید عباسی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اکلاس ملازمین دھرنا کی مکمل حمایت کرتے ہیں۔ حکومتی نوٹیفکیشن 06مئی 2015 پر عمل کیا جائے ۔ حکومت اور وزراء وعدے کرتے ہیں عمل نہیں کرتے۔ ہم اکلاس ملازمین کے ساتھ زیادتی پر خاموش نہیں بیٹھیں گے۔ 72ہزار ملازمین تنظیم غیر جریدہ اکلاس ملازمین کی پشت پر کھڑے ہیں۔آزا د جموں وکشمیر ملازمین کی25تنظیمیں آپ کے ساتھ ہیں۔ سیکرٹری جنرل غیر جریدہ آزاد کشمیر خواجہ عبدالوحید نے کہا کہ اکلاس کے محکمہ کو آفیسران نے تباہ کیا ہے۔ حکومت یہ سمجھے کہ اکلاس ملازمین تنہا ہیں حکومت اور ایم ڈی اکلاس کو تنبیہ کرتے ہیں وہ اکلاس ملازمین کو نارمل میزانیہ پر لائے۔وزیراعظم درد دل رکھنے والی شخصیت ہیں۔ وہ اکلاس ملازمین کے ساتھ انصاف کریں۔ اور ان کے جائز مطالبہ 06مئی2015 کے حکومتی نوٹیفکیشن پر عمل کرے۔ اکلاس ملازمین کے ساتھ سواداعظم تنظیم کھڑی ہے۔ ایپکا آزاد جموں وکشمیر کے مرکزی صدر سید صدیق شاہ نے تا دم مرگ دھرنا سے خطاب کرتے ہوئے کیا کہ حکمرانوں کا سارا ٹبر ہی چور ہے۔ مسلم لیگ، پیپلز پارٹی، تحریک انصاف ، مسلم کانفرنس سب ایک جیسے ہیں۔ اکلاس ملازمین ہمارے بھائی ہیں۔ اس سے قبل کوئی بڑا واقع رونما ہو حکومت ان کے جائز مطالبات پور ے کرے۔ نوٹیفکیشن پر عمل درآمد میں رکاوٹ پیدا کرنے والوں کا بھی محاسبہ کیا جائے۔ ملازمین کی جائنٹ سپریم کونسل آپ کی پشت پر ہے۔ اکلاس ملازمین کی زندگی موت اور مستقبل کا مسئلہ ہے۔ ریٹائرڈ پنشنرز مارے مارے پھر رہے ہیں۔ سیکرٹریٹ ایمپلائز ایسوسی ایشن کے مرکزی صدر محمد شریف اعوان نے کہا کہ اکلاس ملازمین کی مکمل حمایت کرتے ہیں۔ حکومت نے 06مئی2015کا خود نوٹیفکیشن جاری کیا۔ اب اس پر عملدرآمد کرے۔ اکلاس ملازمین کو آفیسران نے تباہ کیا ۔ گریڈ ون سے گریڈ بیس تک کے تمام ملازمین کے ساتھ یکساں سلوک کیا جائے۔ انہوں نے کہاکہ ہم جی او سی مری سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ حکومتی نوٹیفکیشن پر چوبیس گھنٹوں کے اندر عملدرآمد کروائیں۔ بصورت دیگرہم حکومت نہیں جی او سی مری کی طرف مارچ کریں گے۔انہوں نے کہا آزاد جموں وکشمیر کی اعلیٰ عدلیہ اکلاس ملازمین کو انصاف دلانے کے لیے سوموٹوایکشن لے۔ ان کے سامنے ملازمین اکلاس بھوکے پیاسے شدید سردی میں پڑے ہوئے ہیں۔اکلاس ملازمین کی سکولوں سے نکالی پھول جیسی بچیاں ، ضعیف العمر افراد بزرگ انصاف مانگ رہے ہیں۔اب کوئی مذاکرات نہیں ہوں گے۔ عملدرآمد چاہتے ہیں۔ حکومت نے اکلاس دھرنا ملازمین کے خلاف کوئی ایکشن لیا۔ غلط قدم اُٹھایا تو ریاست کا سیکرٹریٹ بند کر دیں گے اور ریاست گیر احتجاج کریں گے۔مرکزی صدر اکلاس ایمپلائز راجہ شبیر خان نے کہا کہ وزراء ممبران اسمبلی ہمارا ساتھ دیں ۔ ان کی زبانیں کیوں بند ہیں۔ ان کے منہ میں زبانیں نہیں ہیں۔ تعلیمی اداروں سے فیسوں کی عدم ادائیگی سے نکالی گئی پھول جیسی بچیاں ضعیف العمر بزرگ دھرنا کیلئے سڑکوں پر ہیں۔ ہم نوٹیفکیشن پر عمل درآمد چاہتے ہیں۔ اس کے بغیر دھرنا سے نہیں اُٹھیں گے۔ دھرنا کے دوران مر گے تو قوم ہمارے جنازے دفن کرے دے۔ دھرنا کے دوران موت کو گلے لگانے کے لیے تیار ہیں۔ خالی ہاتھ دھرنا سے نہیں جائیں گے۔دھرنا سے سید تصور حسین گردیزی ، سبطین گیلانی، راجہ منشا اور دیگر نے بھی خطاب کیا۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...