جہلم،گلی محلوں میں کھلے سنوکرکلب،جرائم پیشہ افرادکی نرسریاں بن گئے

جہلم،گلی محلوں میں کھلے سنوکرکلب،جرائم پیشہ افرادکی نرسریاں بن گئے

جہلم(نامہ نگار )جہلم شہر کے مختلف گلی محلوں میں قائم سنوکر زڈ کلب جرائم پیشہ افراد کے لئے نرسریوں کا کام کرنے لگے۔ بچے اور نوجوان نسل سنوکر کلبوں کے زریعے جوئے اور منشیات کی عادی ہونے کے علاوہ سٹریٹ کرائم کا حصہ بننے لگے ، شہریوں کا ڈی پی اوجہلم سے نوٹس لینے کا مطالبہ، تفصیلات کے مطابق جہلم شہر کے مختلف مقامات جی ٹی روڈ جادہ ، مشین محلہ، محمدی چوک، المرکز روڈ، بلال ٹاؤن ، پروفیسر کالونی ،کالا گجراں کشمیر کالونی،قبرستان چوک اور شہر کے دیگر مقامات پر سنوکر کلبوں کی بھر مار نے بچوں اور نوجوان نسل کو بے راہ روی کی طرف راغب کرنا شروع کر رکھا ہے سکول جانے کی بجائے طلباء سنوکر کلبوں میں جواء کھیل کر اپنا وقت گزاتے ہیں اور اپنے گھروں سے نقدی اور قیمتی اشیا ء چوری کر کے سنوکر کلبوں پر جوئے کی نظر کر رہے ہیں جبکہ اس مکروہ کھیل کی سرپرستی کرنے والے بااثر افراد منشیات اور بدکاری کی بھی ترغیب سنوکر کلبوں پر دیدہ دلیری سے دے رہے ہیں۔قابل زکر امر یہ ہے کہ بااثر سنوکر کلبوں کے مالکان نے اپنے دھندے کو تحفظ دینے اور قانونی کارروائی سے محفوظ رہنے کی خاطر سنوکر کلبوں کے باہر سی سی ٹی کیمرے نصب کر رکھے ہیں اس طرح پولیس یا قانون نافذ کرنے والے افراد کی آمد سے قبل سی سی ٹی وی فوٹیج دیکھ کر قانون نافذ کرنے والوں کی آمد سے قبل جواری چوکنا ہو کر غیر اخلاقی دھندے کو وقتی طور پر بند کر دیتے ہیں۔ متاثرہ بچوں کے والدین ، شہر کی عوامی ، سماجی، مذہبی، کارروباری ، رفاعی ، فلاحی تنظیموں کے عمائدین نے ڈی پی او جہلم سے نوٹس لینے اور کارروائی کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر