’’ جنات روزانہ میری بیوی اور میرے ساتھ ۔۔۔‘‘لاہور کے ایک جوڑے کے ساتھ جنات کا ایسا ناقابل یقین شرمناک کام کہ آپ انسانوں کی جنسی درندگی کو بھول جائیں گے

’’ جنات روزانہ میری بیوی اور میرے ساتھ ۔۔۔‘‘لاہور کے ایک جوڑے کے ساتھ جنات ...
’’ جنات روزانہ میری بیوی اور میرے ساتھ ۔۔۔‘‘لاہور کے ایک جوڑے کے ساتھ جنات کا ایسا ناقابل یقین شرمناک کام کہ آپ انسانوں کی جنسی درندگی کو بھول جائیں گے

  

تحریر: پیر ابو نعمان رضوی سیفی

جنات میں انسانوں سے جنسی رغبت ایک وحشیانہ اور غیر فطری عمل ہے ۔اس پر بہت سے اہل دانش اعتراض کرتے ہیں کہ یہ ناممکن ہے ۔مگر ہمیں واقعات اور علم کی روشنی میں یہ بھی دیکھنا ہے کہ یہ بات کہاں تک درست ہوسکتی ہے۔اب تک سینکڑوں سائل ایسے دیکھ چکا ہوں جو جنات کی جنسی وحشت کا نشانہ بنے اور اسکے آثار بھی ملتے تھے۔میں آپ کو لاہور میں موجود ایک ایسے شخص کی کہانی سنانا چاہتا ہوں جس کے ساتھ ساتھ اسکی بیوی سے بھی ایک کافر جن زناکرتاتھا ۔

یہ اندرون لاہور کا رہنے والا تھا ۔ایک روز جب میں داتا حضور میں موجود تھا وہ مجھے تلاش کرتا ہوا آیا اور اس نے بتا یا ’’ ایک جنّ روزانہ مجھ سے بدفعلی کرتا ہے اور میری بیوی کے ساتھ زنا بھی کرتا ہے ‘‘

میں نے اسکی بات کو جھٹک دیا اور کہا’’ آج کے دور میں یہ کیسے ہوسکتا ہے‘‘پھر میں نے پوچھا ’’ کیا تم گندگی کی حالت میں رہتے ہوں۔غسل کرکے کام پر نہیں جاتے ‘‘

اس نے کہا’’ ایسا کبھی کبھار ہی ہوتا ہے۔پلیدگی سے میں بچ نہیں پاتا‘‘میں نے اسکو اپنے ہاں بلایا اور جب حاضری کرائی تو معلوم ہوا کہ واقعی ایک خبیث کافر جنّ ان دونوں کے ساتھ یہ شرمناک حرکت کرتا تھا ۔میں نے ان کا علاج کیا اور اسکے بعد وہ پابند صوم صلٰوۃ ہوگیا ۔جنات بھی انسانوں کی طرح بے راہ روی کا شکار ہوتے ہیں۔انسان تو جانوروں سے بھی جنسی درندگی سے نہیں چوکتااور جانور انسانوں کے ساتھ ایسا قبیح عمل کرتے ہیں،انسانوں کے ساتھ مخلوق جنات کے جنسی تعلقات پربھی بے تحاشا کتب اور واقعات موجود ہیں ۔اللہ ہم سب کوپاکیزگی سے رہنے کی توفیق عطا فرمائے۔

۔

نوٹ: روزنامہ پاکستان میں شائع ہونے والی تحریریں لکھاری کا ذاتی نقطہ نظر ہیں۔ادارے کا متفق ہونا ضروری نہیں۔

مزید : مافوق الفطرت